مہمند،غلنئی میں مہمند سیاسی اتحاد کا ہنگامی اجلاس کا انعقاد

  مہمند،غلنئی میں مہمند سیاسی اتحاد کا ہنگامی اجلاس کا انعقاد

  

ضلع مہمند(نمائندہ پاکستان)فاٹا انضمام کے بعد نوکریوں،میڈیکل،انجینئرنگ کے داخلوں اور سکالرشپ میں شدید بے ضابطگیوں کے خلاف مہمند سیاسی اتحاد کا ہنگامی اجلاس ہیڈکوارٹر غلنئی میں منعقد ہوا جس میں متفقہ طور پر قرارداد منظور کی گئی کہ ان تمام مراعات پر سب سے پہلے ان لوگوں کا حق ہے جن کے پاس اے کیٹیگری ڈومیسائل اور ضلع مہمند میں رہائش پذیر ہیں:تفصیلات کے مطابق ضلع مہمند کے ہیڈکوارٹر غلنئی میں مہمند سیاسی اتحاد کے کا ایک ہنگامی اجلاس منعقد کیا گیا جس میں سیاسی اتحاد کے صدر سلطان محمد،جنرل سیکٹری لیاقت خان،جمیل خان،اکبر شیر اور کثیر تعداد میں دوسرے سیاسی کارکنان نے شرکت کی۔اجلاس میں فاٹا انضمام کے بعد قبائلی اضلاع اور خصوصاً ضلع مہمند میں پیدا ہونے والی صورتحال پر تفصیلی بحث کی گئی۔اس موقع پر سیاسی رہنماؤں نے کہا کہ ضلع مہمند میں نئی نوکریوں،میڈیکل،انجینئرنگ،سرکاری سکالرشپ اور دوسرے مراعات ان لوگوں کو مل رہے ہیں جن کے پاس بی کیٹیگری کے ڈومیسائل ہیں اور وہ دوسرے اضلاع میں رہائش پذیر ہیں۔جبکہ ان تمام مراعات پر سب سے پہلے ان غریب قبائلی عوام اور طلباء کا حق ہے جن کے پاس اے کیٹیگری ڈومیسائل اور یہاں ضلع مہمند میں رہائش پذیر ہیں۔لیکن بدقسمتی سے ان لوگوں کو اس حق سے محروم کیا جارہا ہے جو کہ ان غریب قبائلیوں کے حق پر ڈاکہ ڈالنے کے مترادف ہے۔اس سلسلے میں مہمند سیاسی اتحاد نے تحریک شروع کر دیا ہے اور ایک مشترکہ کمیٹی بنائی جائے گی جو ضلع مہمند کے تمام تحصیلوں میں مرحلہ وار اجلاسوں کا انعقاد کرے گی اور اس اہم مسئلے کی جانب عوام اور اعلیٰ حکام کی توجہ مبذول کرانے اور ان کو حل کرنے کے لیے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات اٹھائے گی۔۔تاکہ ہمارے قبائلی عوام کو انکا حق مل سکے اور آئندہ کوبھی غیر قانونی طور پر ہمارے حقوق پر قبضہ کرنے کی کوشش نہ کریں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -