قبائلی اضلاع میں تھری وفور جی سروس بحال کی جائے،ابودردا شینواری

قبائلی اضلاع میں تھری وفور جی سروس بحال کی جائے،ابودردا شینواری

  

خیبر (بیورورپورٹ)قبائلی اضلاع میں تھری جی فور جی سروسز فوری بحال کئے جائیں قبائلی اضلاع کے طلباء کا مستقبل تاریک ہو رہا ہے انٹرنیٹ جیسی بنیادی حق سے محروم رکھنا آزادی اظہار رائے پر پابندی کے مترادف ہے ان خیالات کا اظہار خیبر سٹوڈنٹس ایسوسی ایشن کے مرکزی صدر ابودردا شینواری اور نائب صدر حارث شینواری نے لنڈی کوتل پریس کلب کے سامنے انٹرنیٹ بحالی کے حوالے سے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کے دوران کہا، ان کا کہنا تھا کہ حکومت کرونا وائرس کے لاک ڈاؤن کی وجہ سے آن لائن کلاسز کی شروعات کی ہے لیکن قبائلی علاقوں میں انٹرنیٹ جیسی بنیادی سہولت کا فقدان ہے جس کی وجہ سے قبائلی علاقوں میں طلباء کا مستقبل تاریکی میں ڈوبا جا رہا ہے، ابودردا شینواری کا کہنا تھا کہ انٹرنیٹ سروس کی بحالی ان کا آئینی اور قانونی حق ہے جو ان سے چھینا گیا ہے وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلیٰ خیبر پ?تونخوا محمودخان خان کے واضح اعلانات کے باوجود بھی قبائلی اضلاع میں تھری جی فور جی سروسز کی بحالی ممکن نہ ہو سکی جو خلاف آئین اور قانون ہے، مظاہرے میں شریک طلباء نے پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر انٹرنیٹ سروس کی بحالی اور آن لائن کلاسز سے بائیکاٹ کے حوالے سے نعرے درج تھے، مظاہرین نے انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں اور ہیومن رائٹس کمیشن آف پاکستان سے اس حوالے آواز اٹھانے کی بھی اپیل کی،

مزید :

پشاورصفحہ آخر -