خیبر،افغانستان مال سپلائی کرنیوالے ٹرانسپورٹرز کا احتجاجی مظاہرہ

  خیبر،افغانستان مال سپلائی کرنیوالے ٹرانسپورٹرز کا احتجاجی مظاہرہ

  

خیبر (بیورورپورٹ)لنڈیکوتل افغانستان مال سپلائی کرنے والے ٹرانسپوٹروں نے مطالبات کے حق میں احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے پاک افغان شاہراہ کو ہر قسم ٹریفک کیلئے بند کر دیا مظاہرین نے کالے جھنڈے اٹھارکھے تھے اور حکومت سے ٹرانسپوٹروں کے ساتھ ظلم بند کرنے کے نعرے لگا رہے تھے،افغانستان جانے والے پاکستانی گاڑیوں کے ساتھ اپنے ڈرائیوروں کو جانے کی اجازت دی جائے افغان ڈرائیوار ناتجربہ کار ہوتے ہیں گاڑیوں کو نقصان پہنچا تا ہیں،ٹرانسپوٹروں کا موقف لنڈیکوتل خیبر تکیہ کے مقام پر افغانستان مال سپلائی کرنے والے ٹرانسپوٹروں نے مطالبات کے حق میں مظاہرہ کرتے ہوئے پاک افغان شاہراہ کو ہر قسم ٹریفک کیلئے بند کر دیا اور افغانستا ن کو سپلائی بھی بند کر دی مظاہرین سے خطاب کر تے ہوئے ٹرانسپوٹروں خان زیب،حضرت اللہ،خانداد اور دیگر نے کہا کہ طورخمبارڈر پر افغانستان جانے والے مال بردار گاڑیوں کے ساتھ پاکستانی ڈرائیوروں کو اجازت نہیں دیتے اس لئے بارڈر پر افغان ڈرائیور گاڑیوں کو لے جاتے ہیں جسکی وہ سے بہت سے گاڑیوں کو حادثات پیش آئے کیونکہ افغان ڈرائیور ناتجربہ کار ہوتے ہیں اور گاڑیوں کا خیا ل بھی نہیں رکھتے اس لئے وہ مطالبہ کرتے ہیں اپنے گاڑیوں کے ساتھ افغانستان جانے کی اجازت دی جائے انہوں نے کہا کہ جو گاڑیاں حادثات میں خراب ہوئے ہیں مرمت کیلئے معاوضہ دیا جا ئے جبکہ افغانستان میں کئی دنوں سے انکے گاڑیاں پھنسے ہوئے ہیں اس کو بھی فوری طور پر واپس لایا جا ئے انہوں نے کہا کہ افغانستان میں پھنسے ہوئے گاڑیوں کیلئے طریقہ کار وضع کیا جائے تا کہ گاڑیاں وہاں کئی دنوں تک نہ روک سکے کیونکہ جب گاڑیاں افغانستان خالی کرکے واپس آتے ہیں توافغانستان طورخم میں خالی گاڑیاں کئی دنوں تک کھڑے ہوتے ہیں اس سے ٹرانسپوٹروں کو بہت زیا دہ نقصان ہو رہا ہیں بعد ازاں ٹرانسپوٹروں سے مذاکرات کیلئے سیکورٹی فورسز کے آفیسر آئے اور ٹرانسپپوٹروں کو شاہراہ کھلنے کیلئے دباو ڈالا جس پر سیکورٹی فورسز اور ٹرانسپوٹروں کے درمیان تلخ کلامی ہوئی لیکن بعد میں قومی مشر ملک دریا خان ذخہ خیل نے ٹرانسپوٹروں سے مذاکرات کئے اور پاک افغان شاہراہ کو ہر قسم ٹریفک کیلئے کھول دیا اور ٹرانسپوٹروں کو یقین دہانی کرائی کہ انکے تمام جائز مطالبات من وعن تسلیم کرینگے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -