کرونا پر ریسرچ کرناجامعات کا کام ہے جو بند کر دی گئی ہیں، حنید لاکھانی

کرونا پر ریسرچ کرناجامعات کا کام ہے جو بند کر دی گئی ہیں، حنید لاکھانی

  

کراچی (سٹاف رپورٹر) سربراہ بیت الما ل سندھ ورہنماء تحریک انصاف حنید لاکھانی نے کہا ہے کہ اس وقت کرونا اپنے مکمل عروج پر ہے اور کرونا جس انداز سے پھیل رہا ہے ابھی کچھ بھی نہیں کہا جا سکتا کہ مزید کتنے ماہ تک اس کے ساتھ رہنا پڑیگا لیکن ایک بات کنفرم ہے کہ اس سے بچاؤ کے لیے احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد بہت ضروری ہے، کرونا کہیں نہیں جائے گا اور پوری دنیا کو کرونا کے ساتھ رہنا پڑیگا، پوری دنیا کو بند بھی نہیں کیا جا سکتا، جیسے ہی کرونا آیا ساری دنیا کے ممالک نے لاک ڈاؤن سمیت تمام ممکن اقدامات کیے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر سے جاری کردہ بیان میں کیا، حنید لاکھانی کاکہنا تھا کہ کرونا سے بچنے کے لئے تمام ممالک نے لاک ڈاؤ ن کیا لیکن جیسے ہی لاک ڈاؤن کھولا صورتحال ویسی ہی ویسی ہو گئی لاک ڈاؤن اس کا حل نہیں ہے اس کے لیئے تما م دنیا کو ریسرچ کرنا ہوگی اور اس کے خاتمے کے لئے ویکسین تیار کرنا ہوگی، ہسپتالوں میں کرونا سے بچاؤ کے لیئے تمام سہولیا ت جن میں وینٹی لیٹرز ہوں ان کو آپریٹ کرنے والے ہوں، ڈاکٹرز کے پاس مکمل کرونا کٹس ہوں، احتیاطی تدابیر جن میں ماسک، گلوز، سینیٹائزرسمیت صفائی کا خاص خیال رکھنا ہوگا، انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جو صورتحال ہے اس کو مد نظر رکھتے ہوئے پالیسیاں بناناہونگی کیونکہ ہمارے پاس ایک بہت بڑی تعدا د ہے آبادی کی جو روزانہ کی بنیاد پر کما کر کھاتی ہے

مزید :

صفحہ آخر -