کارڈیالوجی ہسپتال، نرسوں کی 3ڈاکٹرز کیخلاف سیکرٹری ہیلتھ کو درخواست

کارڈیالوجی ہسپتال، نرسوں کی 3ڈاکٹرز کیخلاف سیکرٹری ہیلتھ کو درخواست

  

ملتان(نمائندہ خصوصی) نشتر ہسپتال کی نرسوں کی جانب سے احتجاج کے بعد کارڈیالوجی انسٹیٹیوٹ ملتان کی نرسیں بھی انتظامی افسران کے ناروا رویے کے خلاف(بقیہ نمبر16صفحہ6پر)

بول پڑی ہیں،سیکرٹری ہیلتھ کو دی گئی درخواست میں کارڈیالوجی ہسپتال کی نرسوں کی جانب سے موقف اپنایا گیا ہے کہ ڈاکٹر فرحان،ڈاکٹر یاسر اور ڈاکٹر عامر فرقان نے ہسپتال کو ذاتی جاگیر بنا رکھا ہے،نرسوں کے ساتھ غیر انسانی رویہ اپناتے ہیں،کورونا ایمرجنسی کے دوران کام کرنے والی نرسز سے ہتک آمیز رویہ اپنایا جا رہا ہے،جبکہ مریضوں کے سامنے نرسوں کو لغو باتیں کہ جاتی ہیں جبکہ آوٹ سائیڈر لڑکیوں کو ہاسٹل میں رکھنے کے لئے مجبور کیا جاتا ہے،نسرین گل،رضیہ کوثر اور دیگر کا کہنا تھا کہ چارج نرسز کو اس صورتحال سے جلد نکالا جائے اور ڈاکٹرز کے خلاف نوٹس لیتے ہوئے کاروائی کی جائے نرسنگ سپریٹینڈنٹ کی سیٹ پر مستقل تعیناتی بھی عمل میں لائی جائے۔

درخواست

مزید :

ملتان صفحہ آخر -