طیارہ حادثہ، تحقیقاتی ٹیم طیارے کا وائس ریکارڈ اور ڈیٹا ریکارڈ باکس لے کر فرانس چلی گئی ، مگر کیوں؟

طیارہ حادثہ، تحقیقاتی ٹیم طیارے کا وائس ریکارڈ اور ڈیٹا ریکارڈ باکس لے کر ...
طیارہ حادثہ، تحقیقاتی ٹیم طیارے کا وائس ریکارڈ اور ڈیٹا ریکارڈ باکس لے کر فرانس چلی گئی ، مگر کیوں؟

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرور خان کا کہنا ہے کہ حادثے کا شکار ہونے والے طیارے کا وائس ریکارڈر اور ڈیٹا ریکارڈ باکس لے کر تحقیقاتی ٹیم فرانس چلی گئی ہے۔ آئندہ ایک ہفتے میں ابتدائی معلومات سامنے آجائیں گی۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے غلام سرور خان نے بتایا کہ پی کے 8303 کا وائس ریکارڈ اور ڈیٹا ریکارڈ باکس فرانسیسی تحقیقاتی ٹیم اپنے ساتھ فرانس لے کر گئی ہے۔امید ہے کہ آئندہ ایک ہفتے میں ابتدائی معلومات سامنے آجائیں گی۔ ابتدائی انکوائری رپورٹ 22 جون تک پبلک کردیں گے۔کوشش ہوگی انکوائری جلد ازجلدشفاف، منصفانہ اور غیر جانبد ارانہ ہو۔ہماری پوری کوشش ہے کہ طیارہ حادثے کی تحقیقات جلد از جلد ہو۔طیارہ حادثے کی مکمل رپورٹ آنے میں 6 ماہ لگ سکتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ جمعہ سے قومی اسمبلی اسمبلی کا اجلاس شروع ہو رہا ہے جس میں طیارہ حادثے کے معاملے پر بھی بات ہوگی، قومی اسمبلی میں ایئر بلیو سمیت دیگر حادثوں کی رپورٹس پیش کریں گے۔

طیارے میں عملے سمیت 99 افراد سوار تھے۔شہدا کے لواحقین کو 10،10 لاکھ روپے پہنچا دیے گئے ہیں۔ جبکہ  انشورنس کی رقم کی منتقلی میں 4 سے6 ماہ لگیں گے۔ جائے حادثہ پر مکانات اور گاڑیاں بھی متاثر ہوئیں۔ جائے حادثہ کے تمام متاثرہ لوگوں کو بھی امداد دی جائے گی۔

مزید :

قومی -