صوفیا نے محبت، امن اور رواداری کا درس دیا، عباس رضا شمسی

صوفیا نے محبت، امن اور رواداری کا درس دیا، عباس رضا شمسی

  

   ملتان (سٹاف رپورٹر) مصوفیاء نے محبت امن اور رواداری کا درس دیا جس سے برصغیر پاک و ہند میں اسلام تیزی سے پھیلا اور اسلام کو بے پناہ تقویت ملی۔ آج بھی ہم(بقیہ نمبر5صفحہ6پر)

 اگر اولیا کی تعلیمات پر عمل کریں تو یہ معاشرہ آج جنت نظیر بن جائے اولیاء صوفیا نے عمل کے ذریعے دین پھیلایا اور وہ عظیم لوگ اخلاق کا اعلیٰ مرقع تھے صوفی انسان کو خدا سے روشناس کرانے کا ذریعہ بھی ہیں۔ ہمیں صوفیاء کی تعلیمات کو اپنانا ہوگا حضرت شاہ شمس ؒ سبزواری کی تعیلمیات ہمارے لیے مشعل راہ ہیں جن پر عمل پیرا ہوکر ہم اپنی دین و دنیا سنوار سکتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار مقررین نے برصغیر پاک و ہند کے عظیم روحانی پیشوا حضرت شاہ شمس ؒ سبزواری، تبریزی کے 768 ویں سالانہ عرس مبار کے موقع پر حسبِ روایت تنظیم کاروانِ شمس ملتان پاکستان کے زیراہتمام گلستان شمس ملتان میں منعقدہ سالانہ حضرت شاہ شمس ؒ سیمینار سے خطاب میں کیا جسکی صدارت مخدوم سید عباس رضا طارق شمسی جوکہ بانی و سرپرست اعلیٰ تنظیم کاروانِ شمس مخدوم سید طارق عباس شمسی مرحوم کے جانشین و صاحبزادے ہیں نے کی۔مہمانان خصوصی میں سیاسی و سماجی رہنما بیریسٹر سید عابد امام شاہ، سجادہ نشین دربار حضرت سخی نواب ؒ ملتان مخدوم سید زوہیب گیلانی، سجادہ نشین دربار حضرت داود جہانیاں ؒ ملتان و چیئرمین اوورسیز پاکستانیز کمیشن مخدوم شعیب اکمل قریشی ہاشمی، سجادہ نشین دربار حضرت شاہ شمس ؒ سبزواری مخدوم سید علی مہدی شمسی، مخدوم سید محمد شاہ شمسی، مخدوم سید مرتضیٰ شاہ شمس، سید شمس رضا شمسی، سماجی و مذہبی رہنما میاں عامر محمود نقشبندی، سنئیر صحافی مظہر جاوید سیال، ماہر تعلیم و سماجی رہنما نوید احمد ہاشمی اور چئیرمین سوشل ترقیاتی گروپ ملتان ملک محمد یوسف تھے نظامت کے فرائض ممتاز سماجی رہنما صدر ینگ پاکستانیز آرگنائزیشن نعیم اقبال نعیم نے سرانجام دیئے جبکہ دیگر شرکائے خاص میں سیاسی و سماجی شخصیات الحاج محمد اشرف قریشی، محمد سلیم راجہ، محمد سلیم درباری، پروفیسر طارق قادری جیلانی، رشید عباس خان، ضیاء انصاری، ملک شفقت رضا، ممتاز حسین، سید آصف رضا گردیزی، حاجی غلام حسین،محمد وسیم فاروقی گل حسن، محمد عیسیٰ بھٹہ، زیب رسول و مریدین شامل تھے۔ محمد سجاد ملک، ملک محمد عمران یوسف، شہزاد رتن اور محمد عقیل شریف نے ہدیہ نعت پیش کرنے کی سعادت حاصل کی۔ اس موقع پر حضرت شاہ شمس ؒ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے مخدوم سید عباس رضا طارق شمسی اور بیرسٹر سید عابد امام نے کہا کہ ولیوں کے مزارات جنت کے باغیچے ہیں جہاں سے فیوض برکات کا سلسلہ آج بھی جاری ہے یہ رشد و ہدایت کا سر چشمہ ہیں جہاں آکر لوگوں کو روحانی سکون ملتا ہے اور وہ اپنی روح کی تسکین پاتے ہیں۔سجادگان مخدوم سید زوہیب گیلانی، مخدوم سید علی مہدی شمسی اور مخدوم شعیب اکمل ہاشمی نے کہا کہ اللہ تعالیٰ کا قرب حاصل کرنے کے لے اولیا کرام کی محفل میں بیٹھنا ضروری ہے سیمینار کے آخر میں سجادہ نشین مخدوم سید علی مہدی شمسی نے اختتامی دعا کرتے ملک و قوم کی سلامتی کورونا وباء کے خاتمے، کشمیر و فلسطین کے مسلمانوں کیلیے خصوصی دعا کروائی۔ 

عرس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -