محکمہ بلڈنگ میں کرپشن، کارروائی کیلئے شہری کی اینٹی کرپشن میں درخواست

محکمہ بلڈنگ میں کرپشن، کارروائی کیلئے شہری کی اینٹی کرپشن میں درخواست

  

  ملتان (  وقا ئع نگار  )محکمہ بلڈنگ ملتان میں تعمیراتی کاموں کی مد(بقیہ نمبر8صفحہ6پر)

 میں لاکھوں روپے  کے گھپلوں پر شہری نے اینٹی کرپشن کو انکوائری کیلئے درخواست دے  دی ہے۔درخواست میں  محکمہ بلڈنگ کے ٹھیکدار ناصر عباس نے موقف اختیار کیا ہے کہ ایکسین ہائی وے ملتان ہمایوں مسرور کے پاس   محکمہ ہائی وے کے ساتھ  ایکسیئن بلڈنگ ایم اینڈ آر کا بھی اضافی چارج ہے۔رواں ماہ مالی سال کے اختتامی مہینے جون میں بجٹ لیپس ہونے سے بچانے کیلئے  ایکسین بلڈنگ  نے  ایک ایس ڈی او کے سرکاری کوارٹر پر 11 سکیموں کا بجٹ تقریبا 25 لاکھ روپے کاغذوں میں خرچ کرکے کمیشن وصول کرلیا۔اور اس کے علاہ ایکسین نے  اپنی بوگس کمپنیاں بھی بنائی ہوئیں ہیں۔جبکہ دوسری جانب ٹھیکداروں  نے کہا کہ مالی سال کے اختتام پر محکمہ  بلڈنگ کا سرکاری بجٹ مخلتف بوگس سکیموں پر خرچ کرکے ایک کروڑ روپے مزید خورد برد کرنے کی تیاری بھی مکمل کرلی گئیں ہیں۔جسکی ڈیل فرنٹ مین کر رہا ہے۔ذرائع کے مطابق ایکسین کی ڈیرہ غازی خان تعیناتی کے دوران ٹیچنگ ہسپتال کی اپ گریڈیشن کی سکیم میں بھی گھپلوں میں ہائی لیول انکوائری کے بعد انکو وزیر اعلی پنجاب نے ضلع بدر کیا تھا۔اینٹی کرپشن نے درخواست موصول ہونے کے بعد جانچ  پڑتال شروع کردی ہے۔ گورٹمنٹ کنٹریکٹرز اور شہری حلقوں نے وزیراعلی پنجاب اور ایڈیشنل چیف سیکریٹری جنوبی پنجاب سے مذکورہ صورت حال پر فوری نوٹس لینے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔

درخواست

مزید :

ملتان صفحہ آخر -