صوبائی حکومت کا پہلی بار بجٹ سے قبل چیمبر ز آف کامرسن اینڈ انڈسٹریز کے ساتھ مشاورتی اجلاس

    صوبائی حکومت کا پہلی بار بجٹ سے قبل چیمبر ز آف کامرسن اینڈ انڈسٹریز کے ...

  

 پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبرپختونخوا حکومت نے پہلی بار بجٹ سے قبل صوبے بھر کے چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹریز کے ساتھ مشاورتی اجلاس منعقد کیا ہے۔ پری بجٹ کنسلٹیشن سیشن میں صوبائی وزیر صحت و خزانہ تیمور سلیم جھگڑا اور وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے مشیر برائے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن خلیق الرحمان نے شرکت کی۔ سب نیشنل گورننس پروگرام کے تعاون سے منعقدہ پری بجٹ کنسلٹیشن سیشن میں خواتین چیمبر آف کامرس اور ضم شدہ اضلاع کے چیمبرز کے ممبران نے بھی شرکت کی۔ مشاورتی اجلاس میں کاروباری طبقے کی جانب سے آئندہ بجٹ کے حوالے سے تجاویز اور آراء  دیں گئیں جو زیادہ تر ٹیکسیشن اور کاروباری میں آسانی کے حوالے تھیں. اس موقع پر اپنے خطاب میں صوبائی وزیر صحت و خزانہ تیمور جھگڑا نے کہا کہ بزنس کمیونٹی کے صوبے کی ترقی و خوشحالی میں کردار سے آگاہ ہیں۔ اسی وجہ سے کاروبار طبقے کو بجٹ تیاری کے عمل میں شامل کیا گیا اور پری بجٹ کنسلٹیشن سیشن منعقد کیا گیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ دو سے تین سال مشکل گزرے ہیں تاہم اب ابھی معیشت نے یو ٹرن لیا ہے اور جی ڈی پی گروتھ 4 فیصد پر آگئی ہے جس کے بعد اپوزیشن کے پاس بولنے کو کچھ نہیں بچا ہے۔ انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ آئندہ 2 سالوں میں شرح نمو 6 فیصد سے زیادہ پر لے کر جائیں گے۔ بزنس کمیونٹی سے خطاب کرتے ہوئے تیمور جھگڑا نے کہا کہ کاروباری طبقے کی سہولت کے لیے 29 ٹیکسوں کی شرح کم کی۔ جس میں پراپرٹی ٹیکس کو 6 فیصد سے 2 فیصد پر لائے ہیں۔ آئندہ بجٹ میں ریکارڈ ترقیاتی بجٹ دیں گے اور سروس ڈیلیوری والے محکموں پر توجہ دی جائے گی تاکہ کاروباری طبقے کو مزید سہولت میسر آئے۔ سڑکیں بنیں گی اور ادارے بہتر اور اچھے طریقے سے کام کریں گے تو کاروباری سرگرمیوں کو دوام حاصل ہوگا۔ اسی طرح ٹیکس نظام کو مزید بہتر اور یکساں بنانے پر کام کر رہے ہیں اور محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے ساتھ مل کر ون ونڈو بنانے غور کیا جا رہا ہے۔ تیمور جھگڑا نے کہا کہ رواں سال صوبائی محصولات بھی 50 ارب سے زائد ہونے کے امکانات ہیں۔ صوبائی محصولات 2 سال تک 30 ارب تک رہے تاہم گزشتہ سال 42 ارب اور اس سال 50 ارب سے زائد ہونے کے قوی امکانات ہیں۔ یہ 2 سال میں 60 فیصد ہے۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت نجی شعبے کو سازگار ماحول فراہم کر رہی ہے۔ صحت کارڈ پلس سے زیادہ فائدے نجی شعبے کو حاصل ہو رہا ہے۔  تیمور جھگڑا نے کہا کورونا ویکسینیشن کے عمل کو تیز کرنے میں بزنس کیمونٹی تعاون کرے کیونکہ جتنی زیادہ آبادی کو ویکسین لگے اتنی ہی کورونا وائرس کے پھیلاؤ کے تدارک کے لیے اٹھائی جانے والی پابندیاں کم کی جا سکیں گی۔ انہوں نے کہا کہ کورونا ویکسینیشن کے حوالے سے افواہوں پر بالکل یقین نہ کریں۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے مشیر برائے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن خلیق الرحمان نے کہا کہ کاروباری طبقے کے ساتھ مل بیٹھ کر ان کے مسائل حل کریں گے اور صوبائی حکومت ان کی بجٹ کے حوالے سے تجاویز کو زیر غور لائے گی۔ بزنس کمیونٹی کے لیے ان کے دفتر کے دروازے ہر وقت کھلے ہیں اور ان شکایات کا فوری ازالہ ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ ایز آف ڈوئنگ بزنس کے تحت کاروباری طبقے کو مزید ریلیف فراہم کریں گے۔ مشیر وزیراعلیٰ نے کہا کہ محکمہ ایکسائز و ٹیکسیشن نے رواں سال کے محصولات کے اہداف حاصل کر لیے ہیں۔ 

مزید :

صفحہ اول -