بھارت میں غیر قانونی طور پر یورینیم رکھنے کے اب تک کتنے واقعات سامنے آچکے ہیں ؟ جان کر دنیا بھر میں تشویش کی لہر دوڑ اٹھے گی

بھارت میں غیر قانونی طور پر یورینیم رکھنے کے اب تک کتنے واقعات سامنے آچکے ہیں ...
بھارت میں غیر قانونی طور پر یورینیم رکھنے کے اب تک کتنے واقعات سامنے آچکے ہیں ؟ جان کر دنیا بھر میں تشویش کی لہر دوڑ اٹھے گی

  

ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن )بھارت میں غیر قانونی طور پر یورینیم رکھنے کا واقعہ سامنے آیا ہے جس سے بھارت کی غیر ذمہ دارانہ ریاست ہونے کا ثبوت ملتا ہے ۔یورینیم جوہری دھماکا خیز مواد اور طبی تکنیک سمیت متعدد چیزوں میں استعمال ہوتا ہے، چند لوگوں نے یورینیم کی چوری یا غیر قانونی طور پر کان کنی کی وجہ سے بھارت میں جوہری تحفظ کے بارے میں تشویش پائی جاتی ہے۔یہ بھارت میں جوہری منڈی کے موجود ہونے کا امکان بھی ظاہر کرتی ہے جو بین الاقوامی غیر قانونی منڈیوں سے منسلک ہوسکتی ہے۔

تفصیل کے مطابق بھارتی پولیس نے سات افراد کو گرفتار کرکے ان کے قبضے سے 6.4 کلوگرام یورینیم برآمد کرلی ، یہ واقعہ ضلع بوکارو کی مشرقی ریاست جھارکھنڈ میں پیش آیا۔واضح رہے کہ گزشتہ ماہ بھارتی پولیس نےسات کلوگرام (15.4 پاونڈ) قدرتی یورینیم ضبط کیا تھا اور مغربی ریاست مہاراشٹر میں انتہائی تابکار مادے کو 'غیر قانونی طور پر رکھنے' کے الزام میں دو افراد کو گرفتار کیا تھا۔بھارت میں یہ دوسرا موقع تھا جب حالیہ برسوں میں اس طرح کے انتہائی حساس مادے کو پولیس نے قبضہ کیا۔اس سے قبل 2016 میں پولیس نے مہاراشٹر کے علاقے میں تقریبا 9 کلوگرام (19.8 پاونڈ) یورینیم ضبط کیا تھا۔

 مہاراشٹر سے یورینیم قبضے میں لینے اطلاعات سامنے آنے کے بعد پاکستان نے شدید تشویش کا اظہار کیا تھا اور وہاں ریاستی کنٹرول کے طریقہ کار میں پائے جانے والے خامیوں کی نشاندہی کی تھی۔دفتر خارجہ کے ترجمان زاہد حفیظ چودھری نے کہا تھا کہ ہم نے بھارت میں غیر مجاز افراد سے 7 کلو گرام سے زیادہ قدرتی یورینیم ضبط کرنے کی اطلاعات پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -