بیان پر قائم ہوں،میڈیا رائی کا پہاڑ بنا رہا ہے ‘ مفتی محمد سعید

بیان پر قائم ہوں،میڈیا رائی کا پہاڑ بنا رہا ہے ‘ مفتی محمد سعید

  

 جموں(کے پی آئی)وزیراعلی مفتی محمد سعید نے کہا ہے کہ یہ درست ہے کہ جموں وکشمیر میں پر امن اسمبلی چناؤکیلئے پاکستان ، حریت جماعتوں اور عسکریت پسندوں کا رول ہے۔ میں اپنے بیان پر قائم ہوں میڈیا اس بیان کو رائی کا پہاڑ بنارہا ہے ۔ قانون ساز کونسل چناؤ کیلئے اپنا ووٹ ڈالنے کے بعد اسمبلی کمپلیکس کے باہر اخبار نویسوں سے مختصر گفتگو کرتے ہوئے مفتی نے کہا میرے بیان میں کچھ غلط نہیں ہے اور میں اس پر قائم ہوں۔ان کا مزید کہنا تھامیں نے کل اپنے بیان میں پاکستان اور حریت کے بارے میں کیا کہا؟،میں نے یہ کہا تھا کہ انہوں نے (پاکستان اور حریت نے)اس بات کو سمجھ لیا ہے کہ گولیاں یا گرینیڈ نہیں بلکہ ووٹر سلپ میں لوگوں کی تقدیر بندھی ہے اور یہ ووٹر سلپ ہمیں آئین ہند نے دی ہے ،جموں وکشمیر کے عوام کو اس حق پر زیادہ اعتبار ہے ،پاروالوں نے اس بار اس میں مداخلت نہیں کی۔ جیسا کہ ماضی کے انتخابات میں ہوتا تھا۔یاد رہے کہ مفتی نے کل حلف برداری کے بعد پریس کانفرنس میں کہا تھا۔ کہ پاکستان ،حریت اور جنگجوؤں کی وجہ سے الیکشن میں لوگوں کی زیادہ شرکت ممکن ہوئی او ر اگر وہ چاہتے تو اتنی زیادہ شرکت نہیں ہوتی ۔اس بیان پر تنقید کی زد میںآنے کے بعد مفتی نے پیر کو کہا کہ ان کے بیان کے ایک حصے کو ہی اجاگر کیا گیا جبکہ مثبت پہلو کو نظر اندا ز کیاگیا۔انہوں نے میڈیاپر برستے ہوئے کہاوہ اس کو رائی کا پہاڑ بنا دینا چاہتے ہیں،کل میں نے جن مثبت چیزوں کے بارے میں بات کی ،انہیں اجاگر نہیں کیاگیابلکہ زیادہ توجہ اس بات پر دی گئی کہ مفتی نے یہ کہا۔انہوں نے کہا کہ مفتی نے کل یہ کہا کہ کشمیر کو آئین ہند میں جو جمہوری حق رائے دہی کا ملا ہے ،یہ ووٹر سلپ کی وجہ سے ہے اور پار والوں نے اسئے تسلیم کیا ہے۔مفتی کا مزید کہناتھاانہوں نے ہر حربہ آزمایا لیکن کامیاب نہ ہوئے ،سرحد پار قوتوں نے جمہوریت کے ادارے کو تسلیم کیا اور یہ کچھ میں نے کل کہا تھا اور میں اس پر قائم ہوں ،اس بیان سے پیچھے ہٹنے کاسوال ہی نہیں۔

مزید :

عالمی منظر -