محسن حسن خان کاپاکستانی ٹیم کی ناقص منصوبہ بندی پرتشویش کا اظہار

محسن حسن خان کاپاکستانی ٹیم کی ناقص منصوبہ بندی پرتشویش کا اظہار

  

 کراچی(آئی این پی) پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کوچ محسن حسن خان نے زمبابوے کیخلاف فتح کے باوجود پاکستانی ٹیم کی ناقص منصوبہ بندی پرتشویش کا اظہار کردیا۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے محسن خان نے کہاکہ اگلا سفر مزید کٹھن ہوگا، ٹاپ آرڈرکو ذمہ دارانہ کھیل کا مظاہرہ کرنے کی ضرورت ہے۔30 کے قریب رنز بنانے والوں کو بھی لمبی اننگز کھیلنے کی تیاری کرنا ہوگی۔ محسن خان نے کہا کہ مصباح الحق اور وہاب ریاض نے بیٹنگ کی لاج رکھ لی،کیچز ڈراپ کرنے کا مسئلہ ختم نہیں ہوا، فاسٹ بولرز کا ردھم میں آنا اچھی بات ہے۔ محسن خان نے کہا کہ ٹاپ اور مڈل آرڈر کی ناکامی کے بعد مصباح الحق اور وہاب ریاض نے بیٹنگ کی لاج رکھ لی،اوپنرز کی کارکردگی تشویش کا باعث ہے، بڑی ٹیموں کیخلاف بھی گرتے پڑتے 250سے بھی کم رنز بنائیں گے تو فتح کا سفر مشکل ہوگا، ناقص فیلڈنگ اور ڈراپ کیچز کا مسئلہ بھی ختم نہیں ہوا،تاہم فاسٹ بولرز خاص طور پر محمد عرفان کا ردھم میں آنا اچھی بات ہے۔سابق کوچ نے کہا کہ فاسٹ بولرز نے اچھا پرفارم کیا، عمراکمل خاص طور شاہد آفریدی کی بولنگ پر مشکلات کا شکار نظر آتے ہیں، ریگولر وکٹ کیپر سرفراز کو لانے سے بیٹنگ میں بھی بہتری آسکتی ہے۔جنوبی افریقہ کیخلاف میچ میں یاسر شاہ بھی موثر ثابت ہوسکتے ہیں، تاہم لیگ اسپنر کو اس سے قبل کے میچز میں موقع دیکر ردھم میں آنے کا موقع دیا جانا بہتر ہوگا۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -