مجھے نہیں پتا کہ سرفراز احمد اوپننگ بھی کر سکتا ہے: ہیڈ کوچ وقار یونس

مجھے نہیں پتا کہ سرفراز احمد اوپننگ بھی کر سکتا ہے: ہیڈ کوچ وقار یونس
مجھے نہیں پتا کہ سرفراز احمد اوپننگ بھی کر سکتا ہے: ہیڈ کوچ وقار یونس

  

نیپئر (مانیٹرنگ ڈیسک) ورلڈکپ 2015ءکے ابتدائی 2 میچز میں شرمناک شکست کے بعد قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ وقار یونس نے میڈیا پر اپنی شکل دکھانا بھی گوارا نہ کیا تاہم یو اے ای کے خلاف فتح کے بعد دوڑے دوڑے پریس کانفرنس کرنے چلے آئے لیکن اس دوران قومی کرکٹر سرفراز احمد کی بلے بازی سے متعلق ایسی بات کہہ دی جس نے ان کے ہیڈ کوچ ہونے کی صلاحیتوں پر سوالیہ نشان لگا دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق وقار یونس پریس کانفرنس کرنے آئے تو صحافی کی جانب سے یہ سوال پوچھا گیا کہ ناصر جمشید کو نکال کر سرفراز احمد کو ٹیم میں شامل کیوں نہیں کیا جا رہا، آخر ان سے بھی تو اننگز کا آغاز کرایا جا سکتا ہے، اس پر ہیڈ کوچ وقار یونس کے جواب نے سب کو ہی دنگ کر دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ ” سرفراز سے اننگر کا آغاز نہیں کراسکتے ، مجھے نہیں پتا کہ سرفراز اوپننگ بھی کر سکتے ہیں“۔ ایک اور سوال کے جواب میں وقار یونس کا کہنا تھا کہ یون خان بڑے کھلاڑی ہیں اور ان کا کیرئیر ابھی ختم نہیں ہوا ہے جبکہ سرفراز احمد کو ٹیم میں شامل کرنے کافیصلہ سوچ سمجھ کر ہی کیا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ یو اے ای کے خلاف فتح سے پاکستانی ٹیم کے اعتماد میں مزید اضافہ ہوا ہے اور کوشش تھی کہ یو اے ای کو 195 رنز تک روک لیتے کیونکہ ایسا کرنے سے رن ریٹ میں مزید اضافہ ہوتا لیکن بدقسمتی سے ایسا نہیں ہو سکا۔

واضح رہے کہ ابتدائی 2 میچوں میں شکست کے بعد قومی ٹیم کے کپتان مصباح الحق کو پریس کانفرنس کیلئے بھیجا جاتا تھا جو صحافیوں کے تند و تیز سوالات کا سامنا کرتے تھے اور اس دوران وقار یونس دور دور تک نظر نہیں آتے تھے تاہم قومی ٹیم کے میچ جیتنے پر مصباح الحق کی بجائے خود وقار یونس پریس کانفرنس چلے آئے جبکہ شائقین کرکٹ کا کہنا ہے کہ یہ کیسے ”ہیڈ کوچ“ ہیں جنہیں یہ تک نہیں پتا کہ سکواڈ میں شامل کھلاڑی کن صلاحیتوں کے مالک ہیں اور کون سا کھلاڑی کس پوزیشن پر کھیلنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

واضح رہے کہ سرفراز احمد نے آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کر کے اپنے آپ کو ایک بہتر کرکٹر ثابت کیا تاہم ورلڈکپ کے میچوں میں انہیں شامل نہ کر کے ان کے اعتماد کو شدید متاثر کیا گیا ہے جبکہ آسٹریلیا کے سابق کپتان سٹیو وا بھی یہ کہہ چکے ہیں کہ سرفراز احمد ایسا کھلاڑی ہے جو تن تنہا میچ کی صورتحال بدلنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ قومی کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ باﺅلر عاقب جاوید نے کہا تھا کہ سرفراز احمد کسی بھی اور ٹیم میں ہوتے تو وہ اسے ڈراپ کرنے کا سوچ بھی نہیں سکتی تھی لیکن پاکستانی ٹیم میں اسے موقع نہیں دیا جا رہا۔

مزید :

Cricket World Cup 2015 -