حکومت ہر محاذ پر ناکام، ملکی مفاد، بہتر نتائج کیلئے انصاف کا ساتھ دیں: شاہ محمود قریشی

حکومت ہر محاذ پر ناکام، ملکی مفاد، بہتر نتائج کیلئے انصاف کا ساتھ دیں: شاہ ...

بدھلہ سنت (نامہ نگار)پاکستان تحریک انصاف کے وائس چئرمین مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ اوائل میں 2پارٹیاں تھیں اور انہی میں سے ایک کو ووٹ دیتے تھے ان دونوں سے جو طبقہ تنگ تھا جو پڑھ لکھ گیا انہوں نے کہا کہ تیسری جماعت جو بن رہی ہے ان کو بھی آزما یا جائے اور پی ٹی آئی متبادل جماعت کے طور پر ابھری اور نظام سے مایوس لوگوں نے اسمیں شمولیت کی اور آج پی ٹی آئی کے جلسوں میں لاکھوں کا مجمع ہو تا ہے آج شاہ محمود کوئی گرانٹ بانٹنے نہیں نہ ہی کوئی ترقیاتی سکیموں کا اعلان کرنے آیا ہوں ہر شخص اپنی منشاء ،مرضی سے آیا ہے عام الیکشن میں 80لاکھ لوگوں نے پی ٹی آئی کا ووٹ دیا آج پارٹی جھنڈے ،بلے کو ہر شخص جانتا ہے اور آنیوالا دور پی ٹی آئی کا ہے بلدیاتی الیکشن کو ہوئے 14ماہ بعد بھی شیر کے نشان پر بنے ہوئے کوئی شیر ینی نہیں ڈالی کوئی ترقیاتی فنڈز نہیں دئے نہ اختیارات دئے پی ٹی آئی کے چئرمین تو امید ہی نہیں رکھتے ، اس دور سے بہتر تو پرویز مشرف کے دور میں بنے ہوئے ناظمین تھے جن کے پاس اختیارات ،فنڈز تو تھے اور کام بھی ہوئے خیبر پختونخواہ میں پی ٹی آئی نے صوبوں کے 40فیصد فنڈز یونین کونسل کے فنڈز میں دے رہے ہیں اور وہی اسکو خرچ کرنے کا اختیار ہے اور کے پی کے میں پولیس خود مختیار ہے کسی وزیر اعلیٰ،وزیر ایم این اے ،ایم پی اے ماتحت نہیں آزاد ہے اور رزلٹ دے رہی ہے اور صوبے میں مکمل امن و امان ہے محکمہ مال ،پولیس میں باقی صوبوں کی نسبت رشوت میں واضح کمی آئی ملکی مفاد ،بہتر نتائج کے لئے پی ٹی آئی کا ساتھ دیں ،حکومت عام انسانوں،کاشتکاروں کے مسائل حل کرنے میں ناکام ہو چکی ہے ایک ماہ میں 3بار پڑول،ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ کیا گیا ہے اور بلا واسطہ ٹیکسوں میں اضافہ کیا جا رہا ہے جس سے عام آدمی متاثر ہو رہا ہے کرپٹ نظام سے چھٹکارا حاصل کرنے کے لئے پی ٹی آئی نے حکومت وقت کے خلاف آواز بلند کر رہی ہے اگرلوگوں نے شعور سے فیصلہ کیا تو اگلی حکومت پی ٹی آئی کی ہو گی ان خیالات کا اظہار انہوں نے پل ٹرپئی پر ملک سرور خان بوسن ، ملک عامر عباس بوسن،ملک کاشر بوسن ،ملک مرید عباس بوسن کی جانب سے ن لیگ چھوڑ کر پی ٹی آئی میں شمولیت کے موقع پر ایک بڑے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے سابقہ ایم پی اے ملک احمد حسین ڈیہڑ نے کہا کہ عمران خان غریب لوگوں کا ہمدرد ہے اور غریبوں کے لئے سیاست کر رہا ہے سابق ایم پی اے ڈاکڑ اختر ملک نے کہا کہ موجودہ دور میں غریب کا استحصال کیا جا رہا ہے غریب کا بیٹا ڈاکڑ ،انجینئر نہیں بن سکتا کیا ملک سرور بوسن نے کہا کہ قریشی خاندان اور بوسن خاندان نے پہلے بھی ملکر خدمت کی اور اب بھی کریں گے عامر عباس بوسن نے کہا کہ مستقبل کو دیکھ کر پی ٹی آئی میں شمولیت کا فیصلہ کیا ہے اس موقع پر چئرمین کوٹلہ مہاراں مہر دلیر خان مہار نے کہا کہ وہ نئے آنیوالے دوستوں کواپنے پورے پینل کی طرف سے خوش آمدید کہتے ہیں گا زین حسین قریشی ،مخدوم شاہ محمود قریشی کی پوزیشن بوسن برادران کے آنے سے مضبوط ہوئی ہے اس موقع پر چئرمین کڑڑی ٹمک مہر دلبر خان مہار، جمال بھٹی ،علی شیر کھنڈ،خضر حیات کھنڈ،چئرمین 2ایم آر چوہدری شبیر احمد،منیر گجر،غضنفر عباس ،خان بیگ لودھرا،وقاص لودھرا،عزیز خان،جام اختر سمیجہ،ملک شعیب اعوان،چوہدری حبیب ارائیں،راشد منیر ارائیں،حاجی فلک شیر مہار،مہر اللہ دتہ جوتہ ،مہر نذر سنڈھل،ربنواز سیال،مہر شیراز مہار،مہر جمشید مہار،مہر حفیظ مہار،نواب دھول،لیاقت راجپوت،جام عزیز سمیجہ،افتخار غوری،غلام محمد پہوڑ و دیگر سیاسی ،سماجی افراد کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر