پاکستان اور افغانستان کے پاس برادرانہ تعلقات کے سوا کوئی راستہ نہیں: طارق فاطمی

پاکستان اور افغانستان کے پاس برادرانہ تعلقات کے سوا کوئی راستہ نہیں: طارق ...

  

اسلام آباد (آن لائن) وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے خارجہ امور طارق فاطمی نے کہا ہے کہ بھارتی خفیہ ایجنسی پاکستان میں عدم استحکام پھیلانے میں ملوث ہے۔ پاکستان اور افغانستان کے پاس برادرانہ تعلقات کے سوا کوئی راستہ نہیں، افغان مہاجرین کی واپسی رفتہ رفتہ ہوگی، بھارت سے برابری کی بنیاد پر اچھے تعلقات کے خواہاں ہیں۔ سرکاری ٹی وی کو دیئے گئے انٹرویو میں طارق فاطمی نے کہا کہ ہماری بہتری افغانستان سے بہتر تعلقات میں ہے افغانستان میں امن کا پاکستان ہی نہیں پورے خطے کو فائدہ ہے انہوں نے کہا کہ ہم سنٹرل ایشیاء سے ڈیڑھ سال میں جڑ جائیں گے وزیراعظم کی خواہش ہے کہ گوادر سے چار بہار تک روڈ بنے ہم گوادر سے کابل تک بھی موٹر وے بنائیں گے جہاں سے قندوز اور تاجکستان تک پہنچا جائے گا۔ یہ منصوبے طویل المدتی نہیں بہت کم عرصے میں مکمل ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے تمام دوست ممالک‘ مسلم ممالک کو بتایا ہے کہ بھارت کی خفیہ ایجنسی پاکستان میں عدم استحکام پیدا کرنے میں ملوث ہے ۔ وزیراعظم نے اس معاملے کو ہر فورم پر اٹھایا ہے انہوں نے کہا کہ ایران نے افغان مہاجرین کو محدود رکھا لیکن پاکستان میں افغان مہاجرین کی رجسٹریشن کا کوئی طریقہ کار نہیں تھا‘ انہیں کاروبار کی اجزت تھی وہ سفر بھی کررہے تھے افغان مہاجرین کی واپسی کا عمل شروع ہوچکا ہے ۔ انہیں آہستہ آہستہ واپس بھیجا جائے گا۔

مزید :

ملتان صفحہ اول -