”30 سال ہو گئے کرکٹ کیساتھ وابستہ ہوئے لیکن۔۔۔“ لاہور قلندرز کی مسلسل پانچویں شکست کے بعد بالآخر کوچ عاقب جاوید میدان میں آ ہی گئے، ایسی بات کہہ دی کہ جان کر آپ بھی کہہ اٹھیں گے ”ہاں! ہم نے بھی“

”30 سال ہو گئے کرکٹ کیساتھ وابستہ ہوئے لیکن۔۔۔“ لاہور قلندرز کی مسلسل ...
”30 سال ہو گئے کرکٹ کیساتھ وابستہ ہوئے لیکن۔۔۔“ لاہور قلندرز کی مسلسل پانچویں شکست کے بعد بالآخر کوچ عاقب جاوید میدان میں آ ہی گئے، ایسی بات کہہ دی کہ جان کر آپ بھی کہہ اٹھیں گے ”ہاں! ہم نے بھی“

  

شارجہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) فرنچائز لاہور قلندرز کے ہیڈ کوچ عاقب جاوید نے کہا ہے کہ وہ گزشتہ 30 سال سے کرکٹ سے وابستہ رہے ہیں تاہم بیٹنگ میں بار بار ایک انداز میں ناکامی انہوں نے آج تک نہیں دیکھی۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”جب سری دیوی باتھ روم میں گئی تو میں پی ایس ایل کا میچ دیکھ رہا تھا کیونکہ۔۔۔“ سری دیوی کے انتقال سے کچھ منٹ پہلے بونی کپور پی ایس ایل میچ کیوں دیکھ رہے تھے؟ حیران کن انکشاف منظرعام پر آ گیا 

پشاور زلمی کے خلاف شکست کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے عاقب جاوید ٹیم کی کارکردگی سے مایوس دکھائی دئیے اور کہا کہ آپ ایک دو میچز کے بعد توقع رکھتے ہیں کہ ٹیم کی پرفارمنس بہتر ہوگی جیسا کہ اسلام آباد یونائیٹڈ کیساتھ میچ میں دونوں ٹیموں نے اچھا کھیلا لیکن آج ہماری پرفارمنس پھر مایوس کن رہی۔

ان کا کہنا تھا کہ تمام میچز میں ایک ہی طرح کا مسئلہ درپیش آ رہا ہے، ہر کوئی جانتا ہے کہ لاہور قلندرز کے ساتھ کیا مسئلہ ہے۔ ابھی ٹورنامنٹ میں لاہور قلندرز کے پانچ میچ باقی ہیں جن میں بہتر کارکردگی دینے کی کوشش کریں گے۔

ڈیلی پاکستان کا یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ میرا نہیں خیال کہ سختی کرنے سے چیزیں ٹھیک ہوجاتی ہیں، قومی ٹیم کے ساتھ کوچز کا رویہ مختلف ہوسکتا ہے کیونکہ وہ ٹیم کے ساتھ ہی ہوتا ہے لیکن یہاں ایسا نہیں ہوسکتا کیونکہ جو کھلاڑی یہاں کھیل رہے ہیں وہ سال میں چار، پانچ لیگز کھیلتے ہیں، آپ کو انہیں صرف منیج کرنا ہوتا ہے۔

مزید : کھیل /PSL /PSL News Update