ملک کا صدر نہ ہوتا تو ایک تخلیق کار ہوتا :ولاد میر پیوٹن

ملک کا صدر نہ ہوتا تو ایک تخلیق کار ہوتا :ولاد میر پیوٹن
ملک کا صدر نہ ہوتا تو ایک تخلیق کار ہوتا :ولاد میر پیوٹن

  

کیلننگراڈ(صباح نیوز)روسی صدر ولاد میر پیوٹن کا کہنا ہے کہ اگر وہ ریاست کے صدر نہ ہوتے تو اس وقت کوئی تخلیقی کام انجام دے رہے ہوتے۔ 

غیرملکی میڈیا کے مطابق اپنے ایک بیان میں پیوٹن کا کہناتھا کہ وہ روزانہ صبح پابندی کے ساتھ ورزش کرتے ہیں۔اس سوال کے جواب میں کہ جب وہ رنجیدہ ہوتے ہیں تو اس وقت کیا کرتے ہیں؟ روسی صدر نے بتایا کہ "میں کام کرتا ہوں"۔ معلومات اور اعداد وشمار کے بڑے ذخیرے کو ذہن نشین رکھنے کے حوالے سے پیوٹن کا کہنا تھا کہ "جب آپ روزانہ یہ کام کرتے ہیں تو پھر کوئی دشواری نہیں ہوتی"، وہ کئی سیاسی ، ثقافتی اور عوامی شخصیات کی سرگرمیوں کے پرستار ہیں۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : بین الاقوامی