کھلاڑیوں میں کورونا وائرس،خطرے کی گھنٹی

کھلاڑیوں میں کورونا وائرس،خطرے کی گھنٹی

  

خبر ہے کہ آسٹریلیا سے آئے سپن باؤلر فواد کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد مزید دو کھلاڑیوں اور ایک فیلڈنگ کوچ کے کورونا ٹیسٹ بھی مثبت آ گئے اور یوں یہ تعداد چار ہو گئی جس کی وجہ سے پی ایس ایل کے باقی کھیل پر پریشانی کے سائے آ گئے ہیں۔ پی ایس ایل کا یہ میلہ کراچی میں شروع ہوا، سب کھلاڑیوں اور آفیشلز کو باقاعدہ قرنطینہ کی مدت پوری کرنا پڑی۔ پھر ٹیسٹ ہوئے اور منفی آنے پر کھیل شروع ہوا، تاہم پیر کو اس وقت کوئٹہ گلیڈی ایٹر اور اسلام آباد یونائیٹڈ کا میچ منسوخ کرنا پڑا، جب فواد کا ٹیسٹ مثبت آیا، یہ میچ منگل کو ہوا، اس میں اسلام آباد یونائیٹڈ کو فتح ملی، تاہم اب یہ خبر ملی کہ مزید تین کھلاڑی اور آفیشل بھی کورونا کا شکار ہو گئے۔ انہی چھ ٹیموں نے گیارہ میچ لاہور میں کھیلنا ہیں۔ ادھر یہ اطلاع بھی ہے کہ نجی لیبارٹریوں سے جو افراد ٹیسٹ کروا رہے ہیں، ان کی کم از کم نصف تعداد کورونا سے متاثر نکلی ہے۔ یوں یہ کورونا موجود ہے، اس سے قبل جب حکومت نے یکایک تمام پابندیاں ہٹانا شروع کیں تو طبی ماہرین نے خدشہ ظاہر کیا تھا کہ ایسا بتدریج اور وقفے وقفے سے ہونا چاہیے تھا، ان حضرات کی بات نہ سنی گئی، اب اگر کھلاڑیوں کے ٹیسٹ منفی سے مثبت آئے ہیں تو ماہرین کا خدشہ ہے کہ تیسری لہر آسکتی ہے۔ اس لئے این سی او سی کو اس پر غور کرنا چاہیے۔ دوسری طرف پی سی بی کا بھی یہ فرض ہے کہ وہ پی ایس ایل کے کھلاڑیوں اور متعلقہ آفیشلز کے ٹیسٹ پھر سے کرائے کہ کھلاڑیوں میں وائرس کی موجودگی خطرے کی گھنٹی ہے۔

مزید :

رائے -اداریہ -