موٹروے بداخلاقی کیس، فرد جرم عائد، ملزمان کا صحت جرم سے انکار

      موٹروے بداخلاقی کیس، فرد جرم عائد، ملزمان کا صحت جرم سے انکار

  

لاہور(نامہ نگار)انسداددہشت گردی کی عدالت کے جج ارشدحسین بھٹہ نے موٹروے پر خاتون سے بداخلاقی کے کیس میں گرفتار دو ملزموں کے خلاف فرد جرم عائد کردی جبکہ ملزموں نے صحت جرم سے انکار کیاہے،عدالت نے آئندہ تاریخ سماعت پرملزمان کے خلاف استغاثہ کے گواہوں کو آج  طلب کر لیا  انسداد دہشت گری عدالت کے فاضل جج نے جیل میں کیس کی سماعت کی،ملزم عابد ملہی اور شفقت بگا کو عدالت کے روبرو پیش کیا گیا،گزشتہ روزعدالت نے فرد جرم عائد کرتے ہوئے مقدمہ کی نقول ملزمان کے حوالے کیں، اس موقع پردونوں ملزمان کے صحت جرم سے انکار کیا، ملزمان کے خلاف تھانہ گجر پورہ میں خاتون سے اجتماعی بداخلاقی اور لوٹ مار کا مقدمہ درج ہے قبل ازیں موٹروے بداخلاقی کیس میں 10 گواہوں کے بیانات ریکارڈ اورجراح مکمل کی گئی سپیشل پراسکیوٹر عابد بھٹی، اسپیشل پراسکیوٹر حافظ اصغر اور عبدالجبار نے بیانات ریکارڈ کروائے ملزموں کے وکیل گل شیر ایڈوکیٹ نے گواہوں پر جراح کی،جن گواہوں پر جرح کی گئی ہے ان میں پی ایف ایس اے کے رضوان خان،ہیڈ کانسٹبل طارق محمد،ڈولفن کے اہلکارمحمد عباس،اطہر مکینک،اے ایس آئیز احسن الہی،دانیال اشرف اور اے محمد یوسف شامل ہیں۔

مزید :

علاقائی -