مہنگائی 4 ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکی ہے‘ شیخ عباس رضا

مہنگائی 4 ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکی ہے‘ شیخ عباس رضا

  

بہاول پور(بیورورپورٹ) سابق چیئرمین بہاول پورسول سوسائٹی نیٹ ورک شیخ عباس رضا نے اپنے ایک بیان میں کہاہے کہ مہنگائی 4 ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکی ہے جبکہ حکومت نام کی چیز خوردبین سے بھی نظر نہیں آ رہی، گھی‘ چینی‘ آٹا‘ چکن‘ چاول‘ انڈے‘ مصالحہ جات اور دیگر اشیاء خوردنی عوام کی پہنچ سے دور ہو گئیں ہیں۔ حکومت اشیاء ضروریہ کے نرخ کنٹرول (بقیہ نمبر51صفحہ 6پر)

کرنے میں ناکام نظر آتی ہے مہنگائی کا منہ زور گھوڑا عوام کو روندرہا ہے۔انہوں نے کہاکہ حکومت فی الفور ہنگامی بنیادوں پر اقدامات شروع کرے اور مہنگائی پر قابو پائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اوگرا نے ایل پی جی کی قیمت میں ایک روپے 84 پیسے کلو اضافہ کر دیا جس کے بعد گھریلو سلنڈر 21 روپے 78 پیسے جبکہ کمرشل سلنڈر 84 روپے مہنگا ہو گیا۔ ایل پی جی کی نئی قیمت 159 روپے 73 پیسے کلو ہوگئی جبکہ فروری میں ایل پی جی کی قیمت 157 روپے 89 پیسے کلو تھی۔عوام کو سہولتیں دینے کے وعدے کب پورے ہونگے۔ مقتدر حلقے اگر کسی پندھڑواڑے پٹرول کی قیمت نہیں بڑھاتے تو دو ہفتے کے اسی دورانیے میں فیول ایڈجسٹمنٹ کے نام پر بجلی کے نرخ کئی بار بڑھا دیئے جاتے ہیں۔ یہی صورتحال ایل پی جی کی ہے اب سردی ختم ہو چکی ہے‘ لیکن نرخ پھر بھی بڑھا دیئے گئے ہیں جو یقینا صارفین پر اضافی بوجھ ہوگا۔ شیخ عباس رضا نے مزید کہاکہ سبزی فروٹ کی قیمتوں میں 100فیصد اضافہ جبکہ پٹرولیم مصنوعات میں 100فیصد اور بجلی کے بلوں میں 200فیصداضافہ،ادویات کی قیمتوں 450فیصد اضافہ کرکے پوری قوم کو سولی پرلٹکادیا گیاہے۔ انہو ں نے کہاکہ عوام حکومت سے پوچھناچاہتی ہے کہ وہ اس ملک کے عوام سے کون سا انتقام لے رہے ہیں،اب وہ وقت دور نہیں جب بھوک سے مرتی قوم اپنے بال بچوں سمیت حکمرانوں کا گھیراؤ کریں گے اور حکمرانوں کو چھپنے کی بھی مہلت نہیں ملے گی۔

شیخ عباس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -