الزام لگانے والوں سے خود موبائل برآمد ہوگیا، مرتضیٰ وہاب 

     الزام لگانے والوں سے خود موبائل برآمد ہوگیا، مرتضیٰ وہاب 

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)سندھ حکومت کے ترجمان مشیر قانون، ماحولیات و ساحلی ترقی بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا ہے کہ اپوزیشن نے پیپلزپارٹی کے معزز رکن اسمبلی امداد پتافی پر موبائل فون کا جھوٹا الزام لگایا تہمت لگانے اور الزام لگانے والوں کے خود کے پاس سے دوران پولنگ موبائل فون برآمد ہوگیا موبائل فون ملنا الیکشن کمیشن کے قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے وہ بدھ کو سندھ اسمبلی کے باہر میڈیا سے گفتگو کررہے ہیں بیرسٹر مرتضی وہاب نے مزید کہا کہ دوسروں پر الزام لگانے والوں کا حال دنیا نے دیکھ لیا اپنی وفاداری ثابت کرنے کے لئیے خرم شیر زمان موبائل لیکر گئے تھے قانونی طور پر خرم شیر زمان کے خلاف ایکشن ہونا چاہیے انہوں نے کہا کہ یہ عمل کرپٹ پریکٹس کے زمرے میں آتا ہے دو نہیں ایک پاکستان کا نعرہ لگانے والوں کے خلاف ایکشن لیا جائے،پی ٹی آئی والے دوغلے لوگ ہیں پی ٹی آئی کے لوگ نظریاتی لوگ نہیں اپنے ارکان پر پی ٹی آئی کو یقین نہیں پی ٹی آئی کے لوگوں کو یقین ہے کہ انکے ارکان کو اگر ضمیر کے مطابق ووٹ کا حق دیا تو وہ انکے امیدوار کو ووٹ نہیں دیں گے انہوں نے کہا کہ عمران خان کو یقین دلانے کے لئے موبائل لیکر جارہے ہیں،خرم شیر مان اور انکے ساتھیوں کے موبائل کا فرانزک کرایا جائے دیکھا جائے کہ خرم شیر زمان نے کس کو تصاویر بھیجیں کس سے رابطہ رکھا خرم شیر زمان نے ایوان کا تصدق پامال کیا ہے فوری ایکشن ہونا چاہئے تاکہ الیکشن کے شفاف عمل پر اثر انداز ہونے والوں کو سزا مل سکے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن نے خرم شیر زمان کا ووٹ کاسٹ نہ کراکر اچھا اقدام کیا پی ٹی آئی کے لوگ کتنے منافق ہیں ثابت ہوگیا،تہمت لگانے والا خود شکار ہوگیا ہے۔بیرسٹر مرتضی وہاب کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت نے الیکشن کمیشن کو تمام سہولیات فراہم کی ہے امید ہے لوگ اپنے ضمیر کے مطابق ووٹ کاسٹ کریں گیسیاسی تاریخ کی مثال نہیں کہ کوئی اپنے ارکان کو یرغمال بنائے عمران خان نے وعدوں کو پورا نہیں کیا ارکان کو تشویش ہے،بیرسٹر مرتضی وہاب کا کہنا تھا کہ خراب کارگردگی کے باعث ارکان ان سے نالاں ہے دھاندلی کا الزام بھی لگاتے ہیں اور مٹھائیاں بھی تقسیم کرتے ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -