رات کے وقت نشے میں دھت پولیس اہلکار برہنہ ڈانس پر مجبور کرتے ہیں، ہاسٹل میں مقیم مجبور خواتین نے بھانڈا پھوڑدیا

رات کے وقت نشے میں دھت پولیس اہلکار برہنہ ڈانس پر مجبور کرتے ہیں، ہاسٹل میں ...
رات کے وقت نشے میں دھت پولیس اہلکار برہنہ ڈانس پر مجبور کرتے ہیں، ہاسٹل میں مقیم مجبور خواتین نے بھانڈا پھوڑدیا

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں ایک خواتین ہوسٹل میں پولیس اہلکاروں کی طرف سے خواتین کو برہنہ ڈانس پر مجبور کرنے کا شرمناک انکشاف منظرعام پر آ گیا ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق یہ انسانیت سوز حرکت بھارتی ریاست مہاراشٹر کے شہر جلگاﺅں کے ایک ہاسٹل میں ہوئی جہاں گھریلو تشدد اور دیگر کیسز میں ریسکیو کی گئی خواتین کو رکھا جاتا ہے۔ اس وقت ہاسٹل میں 22خواتین موجود ہیں جن کی عمریں 17سے 60سال کے درمیان ہیں۔ ان خواتین میں سے ایک کی ویڈیو گزشتہ دنوں انسانی حقوق کے کارکنوں نے انٹرنیٹ پر پوسٹ کی جس میں وہ پولیس اہلکاروں کے شرمناک سلوک کا انکشاف کر رہی ہوتی ہے۔

خاتون اس ویڈیو میں بتاتی ہے کہ کچھ پولیس والے رات کے وقت ان کے ہاسٹل آتے ہیں۔ وہ ہاسٹل میں بیٹھ کر شراب پیتے ہیں اور خواتین کو برہنہ ہو کر ڈانس کرنے پر مجبور کرتے ہیں۔ خاتون بتاتی ہے کہ وہ پولیس والے خود اس سے بھی برہنہ ڈانس کروا چکے ہیں۔ یہ ویڈیو سامنے آنے پر ضلع جلگاﺅں کے کلیکٹر ابھیجیت راﺅٹ نے انکوائری کا حکم دے دیا ہے۔ انکوائری کے لیے 4رکنی ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے جس میں تمام خواتین آفیسرز شامل ہیں۔ 

مزید :

بین الاقوامی -