" قوم کو عمران صاحب کا آخری خطاب مبارک ہو " مسلم لیگ ن بھی میدان میں آ گئی 

" قوم کو عمران صاحب کا آخری خطاب مبارک ہو " مسلم لیگ ن بھی میدان میں آ گئی 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان کے قوم سے کئے جانے والے خطاب کے بعد مسلم لیگ ن بھی میدان میں آ گئی ہے اور کڑی تنقید کرتےہوئےکہاہےکہ عمران صاحب جو اعتماد کھو چکے ہیں، وہ کس سے واپس مانگ رہے ہیں؟ قوم کو عمران صاحب کا آخری خطاب مبارک ہو.

تفصیلات کے مطابق پاکستان مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے وزیراعظم عمران خان کے خطاب پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ وہ کون سی جمہوریت ہوتی ہے جس میں ووٹ چوری کرکے سلیکٹڈ وزیراعظم قوم پر مسلط کردیاجائے ؟ اربوں روپے میں سینٹ کے ٹکٹ بیچ کر عمران صاحب نے قوم کو ایمان داری کا لیکچر دیا۔انہوں نے کہا کہ کروڑوں روپے بانٹ کر , چئیرمین سینٹ کا الیکشن اور 2018 کا الیکشن چوری کر کے عمران صاحب کو پیسہ چلانے کا خیال آگیا ،واہ، واہ۔

یاد رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے قوم سے خطاب کرتے ہوئے دوٹوک الفاظ میں کہا کہ ہفتے کو وہ اعتماد کے ووٹ کیلئے خود کو قومی اسمبلی میں پیش کررہے ہیں ،ارکان قومی اسمبلی اپنے ضمیر کے مطابق ووٹ دیں، اگر انہیں لگتا ہے کہ مجھے وزیراعظم نہیں رہنا چاہیے تو میرے خلاف ووٹ دیں،اگر انہیں لگتا ہے کہ میں اہل نہیں تو کھل کر کہیں ، یہ نہ کریں کہ سامنے کہیں ہم آپ کے ساتھ ہیں اور پھر پیسے پکڑ کر کسی اور کو ووٹ دے دیں، ایسا کرکے آپ اپنی آخرت تباہ کرتے ہیں،اگر انہیں اعتماد کا ووٹ نہیں ملتا اور تو وہ اپوزیشن میں جاکر بیٹھ جائیں گے۔وزیراعظم نے اپوزیشن کو پیغام دیتے ہوئے کہا کہ  اپوزیشن مجھے بلیک میل کررہی تھی کہ میں انہیں این آر او دے دوں، سپریم کورٹ میں سب نے اکٹھے ہو کر کہا کہ ہمیں سینیٹ الیکشن میں خفیہ بیلٹ چاہیے، انہوں نے پلان کیا کہ سینیٹ کے الیکشن میں پیسہ چلائیں، ان کی کوشش تھی کہ مجھ پر عدم اعتماد کی تلوار لٹک جائے اور ان کے دباؤ میں آؤں اور میں این آر او دوں لیکن اپوزیشن کے ہاتھوں نہ بلیک میل ہوں گا اور نہ ہی کسی کو این آر او دوں گا۔

مزید :

قومی -