آسٹریا میں لاک ڈاون میں نرمی کا بڑا فیصلہ

آسٹریا میں لاک ڈاون میں نرمی کا بڑا فیصلہ
آسٹریا میں لاک ڈاون میں نرمی کا بڑا فیصلہ

  

ویانا(المیر باجوہ)آسٹرین حکومت نے بڑھتی ہوئی کورونا تعداد کے باوجود ریاستی گورنرز کے ساتھ مشاورت کے بعد مزید ابتدائی اقدامات پر اتفاق کیا ہے۔ فیصلہ کے مطابق ایسٹر میں آو¿ٹ ڈور کیٹرنگ کھولنے کی اجازت ہوگی۔اس کے علاوہ رواں ماہ کے وسط سے دوبارہ نوجوانوں اور سکولوں کے کھیلوں کی اجازت دی جائے گی۔ اطلاعات کے مطابق اس کے لئے شرط یہ ہے کہ کورونا انفیکشن کے کیسوں میں کوئی اضافہ نہیں ہوگا تو یہ اقدامات اٹھائے جائیں گے۔

وزیراعظم سبسٹین کرز نے کہا ہے کہ اپریل میں ثقافت کو ایک بار پھر وسیع پیمانے پر شروع ہونا چاہئے۔ یہی بات سیاحت پر بھی لاگو ہوتی ہے۔ نیز ڈور گیسٹرونومی کے افتتاح کو اپریل تک حل نہیں کیا جائے گا ۔ یہ سب اس شرط کے تحت ہے کہ انفیکشن میں بڑے پیمانے پر اضافہ نہیں ہوتا۔

 وزیراعظم سبسٹین کرز نے پیر کی شام وفاقی وزیر صحت روڈلف انشوبر اور ریاستی گورنرز کے ساتھ ایک پریس کانفرنس میں وضاحت کی۔ گورنر مارکس والنر نے مارچ کے وسط میں اپنی وفاقی ریاست میں گیسٹرونیومی کھولنے کا اعلان کیا تھا جس کے تحت اب بھی مختلف ٹیسٹوں کی مختلف حالتوں کی جانچ کی جارہی ہے۔

 وزیر صحت روڈولف انشوبر نے اعلان کیا کہ نرمی کے باوجود انفیکشن کی تعداد کو کم کرنے کی کوشش کی جائے گی۔ مثال کے طور پر خاص طور پر بری طرح متاثرہ علاقوں میں ایکزٹ ٹیسٹ کی ذمہ داری ہونی چاہئے جیسا کہ فی الحال ٹائرول میں ایسا ہی ہے۔ اس بارے میں آئندہ دنوں میں کیرنتن اور سالزبرگ کے ساتھ بات چیت کی جائے گی۔ کام کی جگہوں پر ایف ایف پی 2 ماسک پہننا لازمی ہے۔ تنازعہ کا اصل نکتہ کیٹرنگ انڈسٹری کا افتتاح تھا جسے ریاستی سربراہوں نے فروغ دیا لیکن وزارت صحت نے سب سے بڑھ کر شکوک و شبہات کی نگاہ سے دیکھاہے۔ویانا کے میئر مائیکل لڈوگ اور اوپر آسٹریا کے گورنر جوہانا میکل لیٹنر نے مذاکرات میں ریسٹوران کو کھولنے کی حمایت کی تھی۔ اپوزیشن کی طرف سے حکومتی اقدامات کے منصوبوں کو پذیرائی نہیں ملی۔

مزید :

بین الاقوامی -