نوجوان تاجر کی ہلاکت واپڈا کے گرے ہوئے پول کی تار چھونے سے ہوئی

نوجوان تاجر کی ہلاکت واپڈا کے گرے ہوئے پول کی تار چھونے سے ہوئی
نوجوان تاجر کی ہلاکت واپڈا کے گرے ہوئے پول کی تار چھونے سے ہوئی
کیپشن: tajer and son

  

                         لاہور(لیاقت کھرل)گڑھی شاہو کے علاقہ میں نوجوان تاجر شیخ عامر کی واپڈا کے گرے ہوئے بجلی کے پول سے لٹکتی تار سے چھو جانے پر موت واقع ہوئی ،لیسکو حکام بروقت پول اور تاروں کی مرمت کر لیتے تووہ حادثے سے بچ سکتا تھا، پولیس نے اپنی تفتیش میں لیسکو، ضلعی انتظامیہ اور ٹریفک پولیس کو ذمہ دار ٹھہرا کر ذمہ داروں کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارنا شروع کر دیئے۔تفصیلات کے مطابق صدر بازار کینٹ کے تاجر شیخ عامر علی کی ہلاکت کے پس پردہ حالات سامنے آ گئے ہیں اور اس بات کا انکشاف ہوا ہے کہ علامہ اقبال روڈ جیسی مصروف ترین شاہراہ پر تیز رفتار ٹرک سے نقصان پہنچائے جانے والے بجلی کے پول کی بروقت مرمت نہ ہونے سے نوجوان عامر کی موت واقع ہوئی ہے جبکہ اہل علاقہ کی متعدد بار شکایات کے باوجود ضلعی انتظامیہ، ٹریفک پولیس اور لیسکو کے حکام نے نوٹس نہ لیا ۔ نوجوان شیخ عامر علی ڈیمیج شدہ بجلی کے پول کے قریب سے موٹر سائیکل پر سوار ہو کر گزرنے لگا کہ پول سے لٹکتی تار نے اسے چھو لیا اوروہ بری طرح جھلس کر موقع پر ہلاک ہو گیا ۔ شیخ عامر علی صدر بازار میں کینٹ میں کپڑے کی ایک دکان کے سامنے ایک ٹیبل پر کپڑے کے کٹ پیس رکھ کر سیل کرتاتھااور ایک سماجی ورکر اورسول ڈیفنس میں بھی کام کرتا تھا۔ واقعہ پر پورے علاقے میں دوسرے روز بھی سوگ کا سماں رہاجبکہ والدہ پر غشی کے دورے پڑتے رہے،ہلاک ہونے والے نوجوان شیخ عامر کے عمر رسیدہ والد شیخ عبدالستار ،بڑے بھائی خاور حسین اور عزیزو اقارب مظہر سلیم ،مسرور انصاری،آفتاب احمد،رفاقت علی سمیت دیگر نے ”پاکستان “کو بتایاکہ نوجوان شیخ عامر کی موت ضلعی انتظامیہ ٹریفک پولیس اور لیسکو کے ذمے دار افسران کی نااہلی اور غفلت کے باعث ہوئی ہے،وزیر اعلیٰ نوٹس لے کر ذمہ داروں کی گرفتاری کاحکم دیںوگرنہ ایوانِ وزیرِاعلیٰ کا گھیراﺅ کیا جائے گاجبکہ انچارج انویسٹی گیشن گڑھی شاہو محمد علی بٹ اور تفتیشی افسر غلام مصطفےٰ نے بتایا کہ ذمہ داروں کی گرفتاری کے لئے اعلیٰ افسران سے اجازت حاصل کی جارہی ہے اور گرفتاری کے لئے جلد چھاپے مارے جائیںگے۔

مزید :

علاقائی -