یوکرین کا تیسرہ بڑا شہر فسادات کی زد میں ،50افراد ہلاک ،10سے زائد زخمی

یوکرین کا تیسرہ بڑا شہر فسادات کی زد میں ،50افراد ہلاک ،10سے زائد زخمی

  

                          کیو(ڈسپیچ نیوز ڈیسک)روس کے ساتھ تنازعہ کے بعد یوکرین کے تیسرے بڑے شہر اوڈیسیا میں بھی فسادات پھوٹ پڑے،روس کے حامی اور مخالف گروپوں میں جھڑپوں اور جلاو¿ گھیراو¿ میں 50افرادہلاک،10پولیس اہلکاروں سمیت100سے زائد زخمی ہو گئے،علیحدگی پسندوں نے دو ہیلی کاپٹر مار گرائے،ایک تجارتی تنظیم کے دفتر سمیت12سے زائد عمارتیں نذر آتش کر دی گئیں۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق یوکرین میں روس کے حامیوں اور مخالفین کے درمیان کشیدگی میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔حکام کے مطابق ساحلی شہر میں ہونے والی جھڑپوں کے دوران ہلاکتوں کی تعداد جمعے کی شام تک 409 سے تجاوز کرچکی تھی جب کہ درجنوں افراد زخمی ہیں۔فسادات کے دوران مشتعل مظاہرین نے ایک تجارتی انجمن کے دفتر کو نذرِ آتش کردیا جس میں حکام کے مطابق کم از کم 31 افراد ہلاک ہوئے ہیں۔ آتشزدگی کے نتیجے میں 50 سے زائد افراد زخمی ہیں جن میں 10 پولیس اہلکار بھی شامل ہیں۔تازہ جھڑپوں میں ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد50سے زائد ہے ۔یوکرین کے وزیر داخلہ ارسن ایواکوف نے کہا ہے کہ باغیوں کی جانب سے لڑائی کے دوران بھاری ہتھیاروں کا استعمال کیا جا رہا ہے جس سے ثابت ہوتا ہے کہ انہیں روس کی بھرپور مدد حاصل ہے۔وزیرِ داخلہ کا کہنا تھا کہ علیحدگی پسندوں نے یوکرین کے دو ہیلی کاپٹر مار گرائے ہیں جن کے پائلٹ بھی ہلاک ہو گئے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -