ملائشین طیارہ گمشدگی معاملہ : حکومت نے 12مبینہ دہشتگردپکڑلیے

ملائشین طیارہ گمشدگی معاملہ : حکومت نے 12مبینہ دہشتگردپکڑلیے
Malyasian Airline
کیپشن: MH 370

  

کوالا لمپور (نیوز ڈیسک) گمشدہ ملائیشین طیارے کی تحقیقات نے اب ایک نیا رخ لے لیا ہے اوراب تک کی اطلاعات کے مطابق ملائیشین حکومت نے 11 مبینہ دہشت گردوں کو حراست میں لے لیا ہے۔ ملائیشین اخبارات کے مطابق گرفتار ہونے والے افراد القاعدہ سے رابطے میں تھے اور ان کی عمریں 22 سے 55 سال کے درمیان بتائی جاتی ہیں۔ انسداد دہشت گردی فورس سے تعلق رکھنے والے ایک ملائیشین افسر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس بات کے امکانات کافی زیادہ ہے کہ عسکریت پسندوں کی جانب سے زبردستی اس طیارے کا رُخ موڑا گیا۔ ان کے مطابق القاعدہ سے روابط رکھنے والے اس شدت پسند گروہ کے بارے میں تفصیلی تحقیقات کی جاری ہیں، دوسری جانب ملائیشین اخبارات کے مطابق گرفتار شدگان نے ملائیشیاءمیں حملوں کے منصوبوں کا تو انکشاف کیا ہے لیکن ابھی تک اس طیارے کے بارے میں کسی قسم کا اعتراف نہیں کیا۔ دعویٰ کیا گیا ہے کہ برطانوی نژاد ابو غیتھ کا کہنا ہے کہ اسے ملائیشیوں کو جوتا بم دینے کا حکم دیا گیا ہے۔ اس کے مطابق یہ آلہ کاکپٹ میں داخل ہونے کے لئے استعمال کیا جاسکتا ہے۔ اس حوالے سے مزید تحقیقات جاری ہیں اور اب یہ خیال تقویت پکڑتا جارہا ہے کہ طیارے کی گمشدگی دہشت گردوں کی کارروائی ہوسکتی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -اہم خبریں -