بھارت میں ووٹ چھپانے کی سزا موت

بھارت میں ووٹ چھپانے کی سزا موت
بھارت میں ووٹ چھپانے کی سزا موت
کیپشن: India

  

جھانسی (نیوز ڈیسک) بھارت کے ’’باجنا‘‘ گاؤں میں سماج وادی پارٹی کے کارکنوں نے ایک 80 سال کے دلت کو مار مار کر موت کے گھاٹ اتار دیا۔ اس شخص کا قصور محض اتنا تھا کہ اس نے یہ راز افشاں کرنے سے انکار کردیا کہ اس نے ووٹ کس کو ڈالا ہے۔ اس شخص کو سیاسی کارکنوں کے تشدد کے باعث سر پر شدید چوٹیں آئی تھیں اور یہ ہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔ صرف یہی نہیں بلکہ گاؤں کے دیگر افراد کو بھی دھمکیاں دی جارہی ہیں کہ گاؤں چھوڑ جاؤ یا پھر اسی قسم کے انجام کے لئے تیار رہو۔ ہلاک ہونے والے شخص کے بیٹے نندرام کی جانب سے سیاستدان موتی لال یادو کے بیٹوں کے خلاف ایف آئی ار کاٹ دی گئی ہے لیکن اس کے مطابق اسے انصاف کی توقع نہیں۔ یہ واقع دلتوں کے خلاف طاقتور ذاتوں کی جانب سے تشدد کی تازہ ترین مثال ہے۔

مزید :

انسانی حقوق -