ڈسپنسر اوروارڈ بوائے نے نرس کو نشہ آور چیز کھلادی، زیادتی کی کوشش ، دونوں کو معطل کردیاگیا

ڈسپنسر اوروارڈ بوائے نے نرس کو نشہ آور چیز کھلادی، زیادتی کی کوشش ، دونوں کو ...
ڈسپنسر اوروارڈ بوائے نے نرس کو نشہ آور چیز کھلادی، زیادتی کی کوشش ، دونوں کو معطل کردیاگیا

  

فیصل آباد (ویب ڈیسک) گورنمنٹ جنرل ہسپتال سمن آباد میں ڈسپنسر اور وارڈ بوائے نے نرس کو نشہ آور چیز کھلا دی، نرس رات بھر مدہوش رہی لیکن جب آنکھ کھلی تو اسے احساس ہوا کہ زیب تن کیا گیا لباس اپنی اصل حالت میں موجود نہیں، شاید کوئی چھیڑ خوانی کی گئی۔ ذرائع کے مطابق دونوں نے نرس کو مبینہ طور پر جنسی درندگی کا نشانہ بنانا چاہا مگر ہسپتال سٹاف کو واقعہ کا علم ہونے پر اپنے گھناﺅنے فعل میں ناکام ہوگئے۔ ایم ایس نے معاملہ کو دبانے کی کوشش کی مگر متاثرہ نرس کی طرف سے ایم ایس کو لکھے گئے خط میں واقعہ کا ”بھانڈا“ پھوڑدیا جبکہ سی ای او ہیلتھ نے واقعہ کی انکوائری کیلئے دو رکنی کمیٹی تشکیل دے دی ہے۔

روزنامہ خبریں کے مطابق نرس اقصیٰ نے ایم ایس ڈاکٹر فخر خالد کے نام لکھے گئے خط میں انکشاف کیا ہے کہ 30 اپریل کی شب ڈسپنسر عمر اور وارڈ بوائے عدنان نے مجھے نشہ آور کوئی چیز کھلادی جس کے بعد میں رات بھر مدہوش رہی اور مجھے کوئی ہوش نہ رہا۔ ڈسپنسر اور وارڈ بوائے نے مبینہ طور پر اپنی ہوس کا نشانہ بنانے کیلئے نرس اقصیٰ کو نشہ آور چیز کھلا کر بیہوش کیا جس کا ہسپتال سٹاف کو علم ہوگیا جس پر ڈسپنسر اور وارڈ بوائے اپنے ناپاک عزائم میں ناکام ہوگئے اور یہ بات پورے ہسپتال میں پھیل گئی تو ایم ایس نے معاملے کو دبانے کی پوری کوشش کی مگر متاثرہ نرس نے ڈسپنسر اور وارڈ بوائے کے خلاف کارروائی کیلئے ایم ایس کو خط لکھ دیا اور معاملہ چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیلتھ ڈاکٹر نوازش گورائیہ کے بھی علم میں آگیا۔

شادی سے انکار ، بھارتی نوجوان نے سابقہ دوست کی ذاتی ویڈیوز فحش ویب سائٹس پراپ لوڈ کر دیں

اس واقعہ کے حوالہ سے سی ای او کا کہنا ہے کہ ڈی ایچ او ڈاکٹر شہزاد اور ڈاکٹر وسیم بھٹی پر مشتمل دو رکنی کمیٹی قائم کردی گئی ہے جو واقعہ کی انکوائری کرے گی اور انکوائری رپورٹ آنے پر ذمہ داروں کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی جبکہ اس حوالہ سے موقف معلوم کرنے کیلئے گورنمنٹ جنرل ہسپتال سمن آباد کے ایم ایس ڈاکٹر فخر خالدسے ان کے مطلوبہ موبائل فون پر رابطہ کیا گیا تو انہوں نے ٹیلی فون کال منقطع کردی اور ہسپتال ذرائع کے مطابق کہ واقعہ سی ای او ہیلتھ کے علم میں آنے اور انکوائری کمیٹی تشکیل دئیے جانے پر ایم ایس نے ڈسپنسر اور وارڈ بوائے کو معطل کردیا ہے۔

مزید :

فیصل آباد -