کیا شہباز شریف اپوزیشن لیڈر رہ سکتے ہیں؟ وزیر خارجہ 

کیا شہباز شریف اپوزیشن لیڈر رہ سکتے ہیں؟ وزیر خارجہ 

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک،نیوزایجنسیاں)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ حکومت نے پہلی بار اقتصادی ڈپلومیسی شروع کی جس کے 10 نکات ہیں اور بیرونی سرمایہ کاری کو لانا اقتصادی ڈپلومیسی کا حصہ ہے۔اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ چین، سعودی عرب، ایران اور متحدہ عرب امارات کے ساتھ تجارتی تعلقات بہتر ہوئے ہیں، پاکستانی معیشت چیلنجز اور مواقع کی معیشت ہے، امن اور خوشحالی سے طویل المدتی اہداف حاصل کیے جا سکتے ہیں۔وزیر خارجہ نے کہا کہ عالمی منڈیوں میں پاکستانی برآمدات کا حصہ بڑھانا اور بیرونی سرمایہ کاری کو لانا اقتصادی ڈپلومیسی کا حصہ ہے۔شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاک چین آزادانہ تجارتی معاہدے میں پاکستانی مصنوعات کو ترجیح دی گئی ہے، اگر پاکستانی مصنوعات چین کی 10 فیصد مارکیٹ تک بھی رسائی حاصل کرلیں تو اربوں روپے کی برآمدات ہوں گی۔ان کا بتانا تھا کہ دوست ممالک نے ادھار پر تیل دینے کی سہولت دی، قطر ایک لاکھ پاکستانیوں کو ملازمتیں فراہم کرے گا اور جاپان تکنیکی تربیت فراہم کرے گا۔وزیر خارجہ کا مزید کہنا تھا کہ سائنس ڈپلومیسی بھی چلائی جا رہی ہے، بڑے ممالک پاکستان میں سرمایہ کاری کے لیے تیار ہیں اور پاکستان اس وقت سرمایہ کاری کیلئے بہترین ملک ہے۔ وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ ترقی پذیرممالک کوترقی کیلئے ترقی یافتہ ممالک کا تعاون درکارہے،تجارت، سرمایہ کاری کوفروغ دینے کی ضرورت ہے،سیاحت کا شعبہ معیشت کی بہتری میں اہم کردارادا کرے گا۔ سرمایہ کاری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے کہا کہ غیرملکی سرمایہ کاری، کاروباری مواقع کو آسان بنا رہے ہیں۔وزیرخارجہ نے کہا کہ غیرملکی سرمایہ کاری سے معیشت میں استحکام آئے گا، خطے میں ترقی سے روزگارمیں اضافہ اورترسیلات بڑھیں گی۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ آسان شرائط پرجدید ٹیکنالوجی کا تبادلہ ممکن بنایا جائے گا، سیاحت کا شعبہ معیشت کی بہتری میں اہم کردارادا کرے گا۔ وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ پارلیمانی رہنما کی اچانک تبدیلی سے ایوان کی کارروائی متاثر ہوتی ہے، کیامسلم لیگ (ن)کی قیادت کیا ایوان کو اعتماد میں لے گی؟گزشتہ روز کئے گئے فیصلوں نے بے شمار سوالوں کو جنم دیا ہے، اگر شہباز شریف خرابی صحت کے باعث پارلیمانی رہنما نہیں رہ سکتے تو وہ کیا اپوزیشن لیڈر رہ سکتے ہیں؟۔جمعہ کو وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ایوان میں پارلیمانی رہنما کی بڑی اہمیت ہوتی ہے، پبلک اکاؤنٹس کمیٹی پارلیمنٹ کی سب سے اہم کمیٹی ہے، پارلیمانی رہنما کی اچانک تبدیلی سے ایوان کی کارروائی متاثر ہوتی ہے، شہباز شریف قومی سلامتی کی پارلیمانی کمیٹی کے بھی رکن ہیں، اچانک تبدیلی پر مسلم لیگ (ن)کی قیادت کیا ایوان کو اعتماد میں لے گی،کیا (ن) لیگ تبدیلی کی وجوہات سے آگاہ کرے گی۔دوسری طرف وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے سری لنکا میں ایسٹر دھماکوں پر اظہار افسوس کیلئے سری لنکن ہائی کمیشن پہنچنے پر کہا ہے کہ پاکستان سری لنکا کے ساتھ ہر طرح کی معاونت کیلئے تیار ہے، دہشت گردی ایک چیلنج ہے ہمیں مل کر اس کا مقابلہ کرنا ہو گا، نیشنل ایکشن پلان پر تمام سیاسی جماعتیں متفق ہیں، سری لنکا دہشت گردی کے پیچھے کون ہے ابھی کہنا قبل از وقت ہوگا، خاص طبقے نے پاکستان کے تشخص کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی۔تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اسلام آباد میں سری لنکن ہائی کمیشن پہنچے۔ وزیر خارجہ نے ایسٹر پر سری لنکا میں ہونے والی دہشت گردی پر اظہار افسوس کیا۔ انہوں نے تاثرات کی کتاب میں تعزیتی کلمات بھی درج کیے۔

وزیرخارجہ

مزید : صفحہ اول


loading...