ہمیشہ آزاد ذمہ دارانہ صحافت کی حمایت کی، جمہوری طرز حکمرانی آزاد میڈیا کے بغیر ممکن نہیں: محمود خان 

ہمیشہ آزاد ذمہ دارانہ صحافت کی حمایت کی، جمہوری طرز حکمرانی آزاد میڈیا کے ...

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے آزادی صحافت کے عالمی دن کے موقع پر صحافتی برادری سے یکجہتی کا اظہار کیا ہے، انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت آزادی اظہار رائے اور مثبت تنقید پر یقین رکھتی ہے انہوں نے ہمیشہ آزاد اور ذمہ دارانہ صحافت کے فروغ کی حمایت کی ہے اور آئندہ بھی یہ حمایت جاری رکھیں گے کیونکہ جمہوری طرز حکمرانی آزاد میڈیا کے بغیر ممکن نہیں۔ یہاں سے جاری اپنے خصوصی پیغام میں وزیراعلیٰ نے کہا کہ بلا شبہ صحافت ریاست کا چوتھا ستون ہونے کی حیثیت سے حقیقی جمہوریت کے استحکام اور معاشرے کی اصلاح میں اہم کردار ادا کرتی ہے، کسی بھی قوم کی آئینی و نظریاتی حدود کے تحفظ اور سماجی اقدار کے فروغ میں صحافت کا کردار نمایا رہا ہے پاکستان کے آزاد میڈیا نے نئے پاکستان کے قیام کی جدوجہد میں مثبت کردار ادا کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومتوں میں احتساب اور شفافیت کے مجموعی عمل میں آزاد میڈیا کا کردار قابل تحسین ہے ہمیں میڈیا کی ذمہ دارانہ کردار اور صحافیوں کی قربانیوں پر فخر ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ صحافت ایک طرف حکومت اور عوام کے درمیان رابطے کا ایک بہترین ذریعہ ہے تو دوسری طرف ایک معاشرے کیلئے ایک مؤثر مصلح کی حیثیت بھی رکھتی ہے۔ محمود خان نے کہا کہ ان کی حکومت ذمہ دارانہ صحافت کے فروغ اور صحافتی برادری کے مسائل کے حل کیلئے تمام تر ممکنہ اقدامات اٹھائے گی۔ صوبے میں دیگر طبقات اور شعبوں کی طرح صحافت کے شعبے کی ترقی اور ترویج بھی صوبائی حکومت کی پالیسی کا حصہ ہے۔وزیراعلیٰ نے امید ظاہر کی کہ صحافتی برادری حسب سابق معاشرے کی اصلاح، حکومت کی رہنمائی اور مثبت قومی تشخص کو اجاگر کرنے میں اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔

پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلی خیبرپختونخوا محمود خان نے کہا ہے کہ بنوں پی کے88 کے تمام مسائل حل کرنے کا یقین دلایا ہے اور کہا ہے کہ صوبے کے پسماندہ علاقوں کی ترقی صوبائی حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے۔وزیراعلی سے پی کے 88 بنوں سے ایم پی اے پختون یار خان کی سربراہی میں ایک وفدنے وزیر اعلی ہاؤس پشاور میں ملاقات کی۔ملاقات کے دوران وزیر اعلی کے پرنسپل سیکرٹری شہاب علی شاہ بھی موجود تھے۔ اس موقع پر وفد کے اراکین نے وزیراعلیٰ کو حلقے میں صاف پانی کی عدم دستیابی، سڑکوں کی ابتر صورت حال، تعلیم اور دیگر شعبوں میں مسائل سے آگاہ کیا۔  وزیر اعلی نے وفد کو یقین دہانی کرائی کہ حلقے میں عوام کو درپیش مشکلات کا ازالہ کیا جائے گا اور ان کے مسائل حل کرنے کیلئے تمام اقدامات لئے جائینگے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ ان کی حکومت پورے صوبے کی یکساں ترقی چاہتی ہے تاہم سہولیات سے محروم اور پسماندہ علاقے صوبائی حکومت کی توجہات کا مرکز ہیں، صوبے کے غیر ترقیافتہ علاقوں کو اٹھانے کیلئے قابل عمل ترقیاتی منصوبہ بندی کے تحت اقدامات کئے جائینگے۔ انہوں نے کہا کہ سالانہ ترقیاتی پروگرام میں جاری ترقیاتی سکیموں کی تکمیل کو ترجیح دی گئی ہے تاکہ عوام کو جلد سے جلد ریلیف دیا جاسکے۔صحت اور تعلیم سمیت سماجی خدمات کو تمام شعبوں کا معیار بلند کیا جا رہا ہے، عام آدمی کی ضرورت کو مد نظر رکھ کر ترقیاتی حکمت عملی وضع کی گئی ہے۔ وزیر اعلی نے یقین دلایا کہ بنوں پی کے 88  میں سکولوں، سڑکوں، پانی اور دیگر سہولیات کے حوالے سے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے جائینگے۔

مزید : صفحہ اول


loading...