صلح، حضرت امام حسن ؓ نے امن، سلامتی کے دروازے کھول دیئے: یوسف رضا گیلانی 

صلح، حضرت امام حسن ؓ نے امن، سلامتی کے دروازے کھول دیئے: یوسف رضا گیلانی 

  



ملتان (سٹاف رپورٹر) سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی نے کہاہے کہ حضرت امام حسن ؓنے صبر‘ قربانی‘ امن وسلامتی کاد رس دیا۔ مسلمانوں کو آپس میں لڑانے کی بجائے صلح کو ترجیح دی اور اپنے حق خلافت سے دستبردار ہوکر انہوں نے دو گروہوں کے درمیان مفاہمت کرادی۔ حضرت امام حسنؓ نے امن اور سلامتی کے راستے کھول دئیے۔ وہ بہاء الدین زکریایونیورسٹی ملتان کے جناح آڈیٹوریم میں (بقیہ نمبر30صفحہ12پر)

 ہونے والی حضرت امام حسنؓ  کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔.بہاء الدین زکریایونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر طارق محمود انصاری نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اس کانفرنس سے پاکستان میں معاشرتی اتحاد اور یگانگت کو فروغ ملے گا. یونیورسٹی کے لیے یہ امر انتہائی اعزاز کا باعث ہے کہ اس پر آشوب دور میں اتحاد و اتفاق کی ایک سعی کی جارہی ہے جو سنت اہل بیت ہے. پروفیسر ڈاکٹر محمد حسین آزاد نے حضرت امام حسن ؓ  کی سیرت و کردار اور خدمات کا انتہائی خوبصورت اندازمیں جائزہ پیش کیا.سید محمد انور گیلانی نے کہاکہ حضرت امام حسن ؓ  حضوراکرم ؐ  کے ساتھ بہت زیادہ مشابہت رکھتے تھے. انہوں نے کہا کہ پروفیسر آزاد نے اپنی علمی و تحقیقی کاوش میں حضرت امام حسن ؓکے فکری و نظری و مصالحتی پہلوؤں کا نہایت محققانہ، ذمہ دارانہ اور نتیجہ خیز احاطہ کیا ہے. مخدوم سید سمیع الحسن گیلانی نے اپنے خطاب میں کہا کہ حضرت سیدمخدوم غوث برصغیر پاک و ہند میں تشریف لائے ہیں. آپ نے پہلے اوچ شریف کو اپنا مسکن بنایا اور پھر آپ ملتان تشریف لے آئے. آپ نے برصغیر پاک و ہند میں سلسلہ قادریہ کی بنیاد رکھی۔آپ کے فیض سے لاکھوں افراد نے اسلام قبول کیا.پروفیسر ڈاکٹر سید نثار حسین شاہ نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ حضرت امام حسن ؓ  کی زندگی کو فالو کرتے ہوئے معاشرہ کو سلامتی کے ساتھ جوڑا جاسکتا ہے. کانفرنس میں مشائخ عظام سجادہ نشین، علماء فضلاء نے اہل بیت کے فضائل بیان کیے.ف

مزید : ملتان صفحہ آخر