ٹی ایم او بنوں کے حق میں ملازمین کا مطاہرہ

ٹی ایم او بنوں کے حق میں ملازمین کا مطاہرہ

  



بنوں (نمائندہ پاکستان)ٹی ایم بنوں کے ملازمین نے ٹی ایم او بنوں کے حق میں مظاہرہ کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ ٹی ایم او بنوں عتیق الرحمن بلوچ کو بنوں سے تبدیل نہ کیا جائے ورنہ بلدیہ بنوں کے ملازمین پھر تین تین مہینوں کی تنخواہوں کیلئے سڑکوں پر احتجاج کریں گے لیکن تنخواہ نہیں ملے گی ٹی ایم اے بنوں کے ملازمین اور پنشنیئرز نے میر خاتم گل کی قیادت میں مظاہرہ کرتے ہوئے صوبائی وزیر بلدیات خیبر پختونخوا شہرام خان ترکئی سے مطالبہ کیا کہ ملامزین کے بہتر مفاد میں ٹی ایم او بنوں عتقی الرحمن بلوچ کو بنوں سے کسی صورت تبدیل نہ کیا جائے کیونکہ ان سے پہلے ملازمین چار چار اور پانچ پانچ مہینوں کی تنخواہیں نہ ملنے پر روزنامہ سڑکوں پر ٹائر جلاکر احتجاج کرتے تھے اور بمشکل ایک ماہ کی تنخواہ ملتی تھی لیکن 19/5/2017سے عتیق الرحمن بلوچ کی تعیناتی ہوئی ہے اور اس دوران ملازمین کو بروقت تنخواہیں ملتی ہیں اور ریاٹرڈ،ملازمین کو بھی پنشن کی یکمشت ادائیگی ہورہی ہے پہلے ٹھیکیداروں کو بھی ادائیگی نہیں ہورہی تھی بلکہ ٹریکٹروں اور ٹیوب ویلوں سمیت ٹی ایم اے کی گاڑیوں کی ضروری مرمت کیلئے بھی پیسے نہیں تھے لیکن موجودہ ٹی ایم سے بنوں عتیق الرحمن کی دن رات محنت اور فرض شناسی کی وجہ سے ملازمین اور ٹی ایم اے کے مسائل حل ہوئے ہیں اور بنوں ایک مثالی تحصیل بن گیا ہے لیکن کچھ عناصر انہیں تبدیل کرنے پر تلے ہوئے ہیں لہذا غریب ملازمین کی حاطر انہیں تبدیل نہ کیا جائے اور ملازمین کو دوبارہ فاقہ کشی پر مجبور نہ کیا جائے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر