’’ڈیل اورڈھیل کی باتیں دفن ہوگئیں اور۔ ۔ ۔‘‘ نوازشریف کی درخواست مسترد ہونے کے بعد شاہد خاقان عباسی نے موقف دیدیا

’’ڈیل اورڈھیل کی باتیں دفن ہوگئیں اور۔ ۔ ۔‘‘ نوازشریف کی درخواست مسترد ...
’’ڈیل اورڈھیل کی باتیں دفن ہوگئیں اور۔ ۔ ۔‘‘ نوازشریف کی درخواست مسترد ہونے کے بعد شاہد خاقان عباسی نے موقف دیدیا

  



اسلام آباد (ویب ڈیسک) ن لیگ کے سینئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی نے کہاہے کہ نواز شریف کی ضمانت میں توسیع کی درخواست مسترد ہونے کے بعد ڈیل اور ڈھیل کی تمام باتیں دفن ہوگئی ہیں، نواز شریف کو انصاف اور علاج کا حق دلوانے کیلئے قانونی چارہ جوئی کریں گے، نواز شریف ن لیگ کے روح رواں اور سب سے مقبول لیڈر ہیں، نواز شریف کا ہمیشہ سیاست میں ایک کردار رہے گا، میرا ن لیگ کا صدر اور اپوزیشن لیڈر بننا کچھ لوگوں کی خام خیالی ہے، شاہ محمود قریشی کا مشکور ہوں جنہوں نے مجھے اس قابل سمجھا لیکن ایسی کوئی بات نہیں ہے، شہباز شریف کی خواہش کے مطابق دو تبدیلیاں آئی ہیں، شہباز شریف سمجھتے ہیں کہ وہ شاید تمام عہدوں کو وقت نہ دے سکیں اس لئے بہتر ہوگا کہ ن لیگ کی پارلیمانی پارٹی کا لیڈر اور پی اے سی کا چیئرمین کوئی اور ہو، اپوزیشن جماعتوں کی مشاورت سے نیا پی اے سی چیئرمین منتخب کیا جائے گا۔

روزنامہ جنگ کے مطابق جیونیوز کے پروگرام ’آج شاہزیب خانزادہ کیساتھ‘ میں گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ شہباز شریف پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر ہیں، نواز شریف کو عدالتی حکم پر پارٹی عہدے سے الگ کیا تو یعقوب ناصر کو پارٹی کا عبوری صدر بنایا گیا تھا، شہباز شریف پارٹی کے منتخب صدر ہیں جبکہ مجھے سینئر نائب صدر نامزد کیا گیا ہے، شہباز شریف کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا چیئرمین بنانے کیلئے حکومت سے لڑائی اصول پر تھی، اصولی طور پر پبلک اکاؤ نٹس کمیٹی کا شخص اپوزیشن سے ہونا چاہئے ، اپوزیشن نے اصولوں کی بنیاد پرشہباز شریف کو پی اے سی کا چیئرمین نامزد کیا تھا۔

شاہد خاقان عباسی نےمزید  کہا کہ مجھے شہباز شریف کی مقبولیت کا اندازہ نہیں تھا، وزیراعظم ، وزیرخارجہ، نفیسہ شاہ اور شازیہ مری نے شہباز شریف کے پی اے سی کے چیئرمین رہنے پر اصرار کیا ہے، اگر اپوزیشن اور حکومت کی خواہش ہے کہ شہباز شریف کو نہ تبدیل کیا جائے تو اس کا بھی احترام کرسکتے ہیں، شہباز شریف اپنے ٹیسٹ کروانے کیلئے لندن گئے ہیں اور واپس آئیں گے۔ شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ سیاست میں مریم نواز کا ایک کردار رہا ہے، مریم نواز نے ماضی میں نہ پارٹی نہ ہی کوئی سرکاری عہدہ رکھا تھا، مریم نواز پارٹی میں شامل ہوگئی ہیں اور نائب صدر ہیں، مریم نواز پہلے کی طرح اپنا کردار ادا کرتی رہیں گی، مریم نواز نے کارکنوں اور عوام کے دل میں جگہ بنائی ہے، اسی پر اپنی سیاست کو آگے بڑھائیں گی۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ پرویز رشید اور طارق فاطمی کا ہمیشہ پارٹی کے اندر اہم کردار رہا ہے، انہیں عہدے دے کر پارٹی اور ملکی سیاست میں ان کی خدمات کو تسلیم کیا گیا ہے،نیوز لیکس کیا تھا یا کیا نہیں تھا ،یہ حقائق بھی عوام کے سامنے آنے چاہئیں، ایک ٹروتھ کمیشن بنادیں جہاں تمام حقائق سامنے آجائیں، یہ کسی کو سزا دینے کی بات نہیں بلکہ مستقبل میں غلطیوں سے بچنے کیلئے ضروری ہے۔ایک سوال کے جواب میں  شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اسحاق ڈار بیرون ملک ہیں اسی لئے انہیں بین الاقوامی معاملات کا عہدہ دیا گیا ہے، انٹرنیشنل معاملات میں اسحاق ڈار پارٹی کی مدد کرسکتے ہیں، انصاف کی توقع ہوگی تو اسحاق ڈار وطن واپس آجائیں گے، اسحاق ڈار پر ابھی تک کوئی الزام نہیں لگا لیکن ان کیخلاف کارروائی ہورہی ہے۔

مزید : قومی /سیاست


loading...