وزیراعظم کا احتساب سے متعلق بڑا فیصلہ ، بیورو کریسی کی نیندیں اڑ گئیں

وزیراعظم کا احتساب سے متعلق بڑا فیصلہ ، بیورو کریسی کی نیندیں اڑ گئیں
وزیراعظم کا احتساب سے متعلق بڑا فیصلہ ، بیورو کریسی کی نیندیں اڑ گئیں

  



اسلام آباد  (ویب ڈیسک)  عمران خان نے کرپٹ بیوروکریٹس کیخلاف 800 کیسز کی تحقیقات کی منظوری دے دی۔دنیا نیوز کے مطابق  یہ مںظوری وزیراعظم سے ڈائریکٹر جنرل اینٹی کرپشن اعجاز حسین شاہ  کی ملاقات کے دوران دی گئی ۔ علامہ اقبال انٹر نیشنل ائیر پورٹ پر ہونے والی ملاقات میں کرپشن کے موضوع پر بات ہوئی۔ وزیر اعظم نے ڈی جی اینٹی کرپشن کو باور کرایا کہ کرپشن کا خاتمہ حکومت کی اولین ترجیح ہے، کرپشن کے ناسور نے ملکی معیشت کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا اور اداروں کو تباہ کیا، جس سے عام آدمی کی زندگی بری طرح متاثر ہوئی۔

وزیراعظم نے کہا کرپشن اور ترقی کا سفر ایک ساتھ نہیں چل سکتا، کرپشن کے خاتمے اور بدعنوان عناصر کیخلاف بلا تفریق کارروائی کی جائے گی،حکومت اس ضمن میں ہر ممکن تعاون فراہم کرے گی، آپ آزادانہ کام کریں، کوئی خوف نہیں ہونا چاہیے ، پنجاب میں جس نے خزانے کو نقصان پہنچایا، کارروائی کریں۔ ملاقات میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار بھی موجود تھے۔

اعجاز شاہ نے بتایا کہ کئی اہم کیسز کی تحقیقات اور بڑے افسران کیخلاف کارروائی کی اجازت مل گئی ، جس افسر کیخلاف کیس ہوگا، اسے پہلے جواب دینے کا موقع دیا جائے گا۔ ذرائع نے بتایا کہ گریڈ سترہ سے بائیس تک کے بڑے افسران کیخلاف بھی کارروائی کی مںظوری مل گئی ، اس سے قبل پچاس فیصد کیسز پٹواری اور کانسٹیبل تک محدود تھے لیکن بڑے افسران بچ جاتے تھے ۔ 

مزید : قومی


loading...