حسن علی قتل کیس، عمر کوٹ میں مہر برادری سول سوسائٹی اور شہریوں کا پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ

حسن علی قتل کیس، عمر کوٹ میں مہر برادری سول سوسائٹی اور شہریوں کا پریس کلب کے ...
حسن علی قتل کیس، عمر کوٹ میں مہر برادری سول سوسائٹی اور شہریوں کا پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ

  



عمرکوٹ (سید ریحان شبیر ) چند روز قبل جھول  کے نوجوان رہائشی حسن علی مہر کو شہدادپور میں بےدردی اور سفاکانہ  قتل کیئےجانے واقعے  کےخلاف اور قاتلوں عدم گرفتاری پر آج  عمرکوٹ میں مہربرادری سول سوسائٹی اور  شہریوں نے احتجاج اور پریس کلب کےسامنے بڑا احتجاجی   مظاہرہ  کیا اور قاتلوں کی فوری گرفتاری لواحقین سے انصاف کی اپیل  .

تفصیلات کےمطابق  شہدادپور میں ایسا دردناک واقع پیش آیا کہ انسانیت ہی شرما جائے جھول کے نواحی گاوں کے نوجوان حسن علی مہر کو بھنبھرا برادری کے بااثر افراد نے اس بےدردی سے قتل کرکے سر دھڑ سے الگ کیا اور جسم کے کئے ٹکڑے کرکے مٹی میں گاڑ دیا جس پر  مقتول کے لواحقین کا عمرکوٹ کے تین تلوار چوک سے اللہ والا چوک  تک ریلی نکال کر  سخت احتجاج اور مظاہرہ   کیا گیا اس موقع پر مقتول کے بھائی ڈاکٹر رئیس مہر نے میڈیا  کو بتایا کہ کچھ روز قبل مقتول عمرکوٹ سے اپنے گھر جانےوالے حسن مہر کو بیچ راستے میں سونوخان بھنبھرو اور قاسم بھنبھرو سیمت دوسرے افراد نے اغوا کرکے بیمانہ قتل کیا گیا انہوں نے مزید کہا حسن مہر کو قتل کرکے ہمیں اطلاع دی گئی کہ لاش لےکر جائو بڑے افسوس کی بات ہے کہ ایسا دردناک و ہولناک واقع کرنے والے  قاتل سرےعام گھوم رہےہیں اور پولیس ان کو بچانے میں لگی ہوئی ہے ۔

سماجی رہنما سردار بھیو نے بتایا کہ انسانیت کی تذلیل آمیز واقع کے ذمہ دار قانون کی گرفت میں نہ آنا یہ ہماری سمجھ باہر ہے انہوں نے مزید کہا کہ اس معاشرے کے ٹھیکیداروں کو ایسے واقعات روکنے کیلئے فوری اقدامات لینے چاہیئے حیرت کی بات ہے کہ شہدادپور کی پولیس ملزمان کو بچانے میں لگی ہوئی ہے انہوں نے کہا کہ ہم اعلیٰ حکام و اعلیٰ عدلیہ سے درخواست کرتےہیں کہ مقتول کےقاتلوں کو فوری گرفتار کرکے عبرتناک سزا دی جائے تاکہ ہمارہ معاشرہ ایسے واقعات سے بچ سکےاحتجاج کرنے والوں نے ہاتھوں میں پلےکارڈ اٹھا رکھے تھے جس پر مقتول کے تصاویر آویزاں تھی اور ساتھ میں اداروان سے انصاف کی اپیلیں بھی درج تھیں ۔

مظاہرین میں نظر محمد مہر،میرن مہر،ادیب حاجی ساند،محب منگریو،محمد اسلم مہرپرکاش مالہی،جئہ دیو کھتری،راجیش میگھواڑ و دیگر نے بڑی تعداد میں شرکت کی مظاہرین اعلیٰ حکام و اعلیٰ قیادت سے مطالبہ کیا کہ نوجوان کے قتل میں ملوث بااثر مجرموں کو گرفتار کرکے قرار واقعے سزادی جائے تاکہ ایسے ہولناک واقعات کی روکتھام کی جاسکے.

مزید : علاقائی /سندھ /عمرکوٹ