وزیر اعظم نے آرکیالوجی کو نظام تعلیم کاحصہ بنانے کیلئے اہم اعلان کردیا

وزیر اعظم نے آرکیالوجی کو نظام تعلیم کاحصہ بنانے کیلئے اہم اعلان کردیا
وزیر اعظم نے آرکیالوجی کو نظام تعلیم کاحصہ بنانے کیلئے اہم اعلان کردیا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر اعظم عمران خان نے کہاہے کہ ماضی میں کسی نے تاریخی ورثے کو محفوظ بنانے کیلئے کچھ نہیں کیا ، دنیا بھر میں تاریخی مقامات کو محفوظ بنایا جاتاہے ، تمام ممالک نے تاریخی ورثے کومحفوظ رکھا ہے لیکن پاکستان میں تاریخی ورثے کے تحفظ کیلئے کچھ نہیں کیا گیا ، وقت آگیا ہے کہ آرکیالوجی کو اپنے تعلیمی نظام کاحصہ بنایا جائے ۔

تفصیلات کے مطابق شاہی قلعے میں تصویر ی دیوار کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہاکہ پاکستان کاشمالی علاقہ جات سوئٹزر لینڈ سے زیادہ پرکشش ہے ، خوشاب میں ایک بار شکار کیلئے گیا تو وہاں دو ہزار سال پرانا شہر دیکھا ۔انہوں نے کہا کہ وقت آگیاہے کہ آرکیالوجی کو اپنے تعلیمی نظام کاحصہ بنایا جائے ، پاکستان کا کرنٹ اکاﺅنٹ خسارہ صرف 19ارب ڈالر ہے ، ہم پاکستان میں سیاحت کوفروغ دیکر غیر ملکی قرضوں سے نجات حاصل کرسکتے ہیں، پاکستان میں دوسرے مذاہب کے بے شمار مذہبی مقامات ہیں ، آئندہ نسلوں کیلئے ایسے مقامات کو محفوظ بنایا جانا ضروری ہے ۔

وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ ترکی کی سیاحت سے سالانہ آمدن 40ارب ڈالر اور ملائیشیا میں صرف ساحلی سیاحت سے 20ارب ڈالر کی آمدن ہوتی ہے ، مذہبی سیاحت کے حوالے سے پاکستان کا منفرد مقام ہے ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...