صوبے میں کرایوں میں کمی، کورونا ٹیسٹنگ کی نظر ثانی پالیسی تیار کر لی: اجمل وزیر

صوبے میں کرایوں میں کمی، کورونا ٹیسٹنگ کی نظر ثانی پالیسی تیار کر لی: اجمل ...

  

پشاور(این این آئی)مشیر اطلاعات خیبر پختونخوا اجمل خان وزیر نے کہا ہے کہ صوبے میں کورونا وائرس ٹیسٹنگ کی نظر ثانی شدہ پالیسی تیار کی گئی ہے جس کے مطابق پہلے مرحلے میں ٹیسٹوں کی تعداد 2000 تک بڑھائی جائیگی جبکہ دوسرے مرحلے میں یہ تعداد 5 ہزار اور پھر10 ہزار تک بڑھائی جائیگی۔ اتوار کے روز میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے اجمل وزیر نے کہا کہ فرنٹ لائن پر موجود عملہ ٹیسٹ میں پہلی ترجیح ہوگا۔ متاثرہ افراد کے اہلخانہ کے حوالے سے بھی پالیسی وضع کر لی ہے جس میں ایک گھر میں 5 سے کم افراد ہونے پر سب کے ٹیسٹ ہوں گے جبکہ تعداد زیادہ ہونے پر زیادہ عمرکے 5 افراد کے ٹیسٹ کیے جائیں گے۔ اسی طرح متاثرہ شخص کے قریبی افراد کے بھی ٹیسٹ ہوں گے۔ عوامی معاملات والے افراد میں علامات ظاہر ہونے پر ٹیسٹ ہوں گے۔ دکانداروں، ٹرانسپورٹ سروس، قانون نافذ کرنیوالے اداروں کے اہلکار بھی شامل ہیں جبکہ بیرون ممالک سے آنے والے مسافروں کے 48گھنٹوں کے اندر ٹیسٹ ہوں گے۔ صوبے میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 108 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جس سے کورونا مریضوں کی مجموعی تعداد 2907 ہوگئی ہے جبکہ 24گھنٹوں میں 11 اموات بھی ریکارڈ ہوئیں جس سے اموات کی کل تعداد 172 ہوگئی ہے۔دریں اثناء مشیر اطلاعات نے آزادی صحافت کے عالمی دن کے موقع پر کہا کہ خیبر پختونخوا حکومت آزادی صحافت پر مکمل یقین رکھتی ہے۔ آزادی صحافت کے عالمی دن کے موقع پر میں ان صحافیوں کی خدمات کا ذکر ضرور کروں گا جو کورونا کے حوالے سے عوام میں آگاہی پیدا کرتے کرتے خود کورونا کا شکار ہوئے۔ آزادی صحافت ملک اور قوم کی ترقی میں اہم کردار کرتی ہے اور پاکستان بھی صحافت کی آزادی پر یقین رکھتا ہے۔علاوہ ازیں، اجمل وزیر نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کے بارے میں کہا کہ قیمتوں میں تاریخ میں پہلی بار سب سے زیادہ کمی کی گئی ہے۔ کمی کے بعد خیبر پختونخوا ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے بھی کرایوں میں کمی کا اعلان کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پبلک ٹرانسپورٹ پر پابندی ہٹانے کے بعد کرایوں میں کمی پر عملدرآمد شروع کیا جائے گا۔

اجمل وزیر

مزید :

صفحہ آخر -