ملک میں کورونا کے بد ٹڈی دل بھی بے قابو، وفاقی حکومت سندھ سے لڑ رہی ہے: بلاول

    ملک میں کورونا کے بد ٹڈی دل بھی بے قابو، وفاقی حکومت سندھ سے لڑ رہی ہے: ...

  

کراچی (سٹاف رپورٹر، نیوز ایجنسیاں)چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت کورونا کے بجائے سندھ حکومت سے لڑ رہی ہے، سندھ حکومت کی وجہ سے ملک بھر میں کورونا کے معاملے پر برقت اقدامات ہوئے۔اتوار کو بلاول بھٹو زرداری سے وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ نے کراچی میں ملاقات کی۔ بلاول بھٹو کو وزیر اعلیٰ سندھ نے کورونا وائرس کے حوالے سے تازہ صورتحال پر بریفنگ دی جبکہ وزیر صحت ڈاکٹر عذرا پیچوہو، ڈاکٹر عبدالباری اور ڈاکٹر فیصل نے محکمہ صحت کے اقدامات سے آگاہ کیا۔ترجمان پی پی پی کے مطابق اس موقع پر بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ وبا ملک میں تشویش ناک صورتحال اختیار کرتی جارہی ہے۔ کورونا وائرس سے بڑھتی ہوئی اموات کی تعداد تشویشناک ہے، سندھ حکومت کی وجہ سے ملک بھر میں بروقت اقدامات ہوئے۔ اگر سندھ حکومت فوری اقدامات نہ کرتی تو صورتحال بگڑ سکتی تھی۔ انہوں نے کہا کہ آج دنیا سندھ حکومت کے اقدامات کی تعریف کر رہی ہے۔ وفاقی حکومت کے رویے پر افسوس ہے، وفاقی حکومت کورونا کے بجائے سندھ حکومت سے لڑ رہی ہے۔ پیپلزپارٹی کی سندھ حکومت صرف ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کی جانب سے دی گئی گائیڈ لائن پر کام کر رہی ہے، یہی وجہ ہے کہ سندھ حکومت کے بروقت اقدامات سے پاکستان ووہان، اٹلی اور نیویارک بننے سے بچ گیا۔ وفاقی حکومت نے ڈاکٹرز، نرسز اور پیرا میڈیکل اسٹاف کو کوئی سہولیات فراہم نہیں کیں، وفاقی حکومت کی یہ ذمے داری ہے کہ وہ تمام صوبوں کی مدد کرے۔انہوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن سے متاثرہ روزانہ اجرت پر کام کرنے والے لوگوں کے لیے بھی وفاقی حکومت نے اب تک کچھ نہیں کیا۔ ہماری اولین ترجیح عوام کی زندگی کو محفوظ بنانا ہے اور ایک سازش کے تحت ہماری خدمت کے جذبے کو سبوتاژ کرنے کی کوشش جا رہی ہے۔علاوہ ازیں سما جی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں بلا ول بھٹوزرداری نے کہا ہے کہ ٹڈی دل حملے کے وقت وفاقی وزیر برائے غذائی تحفظ لا پتہ ہیں۔ ٹڈی دل پر قابو نہ پا یا گیا تو ایک سانحہ جنم لے گا۔ گزشتہ برس صوبوں کو ٹڈی دل کے رحم کرم پر چھو ڑ دیا گیا تھا اب بھی ٹڈی دل حملے کے وقت وفاقی وزیر برائے غذائی قلت لا پتہ ہیں۔دریں اثناء ایک بیان میں بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت میڈیا کو دبانے والی کوششوں سے باز آ جائے۔میڈیا کو دبانے کی کوششوں کا مقصد میڈیا کو اپنے مخالفین پر جبر کے لیے ایک آلے کے طور استعمال کرنا ہے۔ تحریک انصاف حکومت کے دوران پریس کی آزادی کی سالانہ درجہ بندی میں تنزلی ہوئی ہے۔پاکستان میں صحافیوں نے آزادی صحافت کے لیے بڑی قربانیاں دی ہیں اور پیپلز پارٹی ہمیشہ صحافی برادری کے شانہ بشانہ کھڑی رہی اور آئندہ بھی رہے گی۔

بلاول

مزید :

صفحہ اول -