کپاس کے کاشتکاروں کی بھرپور رہنمائی کی جائے،واصف خورشید

کپاس کے کاشتکاروں کی بھرپور رہنمائی کی جائے،واصف خورشید

  

اوکاڑہ (یواین پی) سیکرٹری زراعت پنجاب واصف خورشید نے کہا ہے کہ کپاس کی بوائی کے ہدف کے حصول کیلئے کاشتکاروں کی فنی رہنمائی کے سلسلہ میں جنگی بنیادوں پر کام کیا جائے۔اس سلسلہ میں فیلڈ فارمیشنز تمام تر توانائیاں بروئے کار لائیں۔انہوں نے مزیدکہا کہ کپا س کی ٹیکنیکل ایڈوائزری کمیٹی کے پندرہ روزہ اجلاس باقاعدگی سے منعقد کئے جائیں۔اجلاس میں تمام ممبران کی وڈیو لنک کے ذریعے شمولیت یقینی بنائی جائے۔ٹیکنیکل ایڈوائزری کمیٹی کی جاری کردہ سفارشات کاشتکاروں تک بروقت پہنچا ئی جائیں۔کورونا وائرس سے محفوظ رہنے کیلئے ایس او پیز پر عملدرآمد کیا جائے اور کاشتکاروں کو بھی حفاظتی تدابیر اپنا نے بارے رہنمائی فراہم کی جائے۔انہوں نے کہا کہ کپاس کے کاشتکاروں کی فنی رہنمائی ودیگر معلومات کی فراہمی کیلئے تمام ممکنہ ذرائع ابلاغ کا موثر استعمال کیا جائے۔ کپاس کے کاشتکاروں کو روزانہ کی بنیادپر موسمی پشین گوئی بارے آگاہ رکھا جائے۔کپا س کے بیج پر دی جانے والی سبسڈی بارے کاشتکاروں کو بھرپور آگاہی دی جائے۔انہوں نے کہا کہ رواں سیزن 2لاکھ ایکڑ پر 1000روپے فی ایکڑ کے حساب سے کپاس کی منظور شدہ اقسام کے بیج پر سبسڈی فراہم کی جارہی ہے۔تھیلے میں موجود واؤچر کے ذریعے شفاف انداز میں سبسڈی فراہم کی جارہی ہے۔کاشتکاروں کو معیاری زرعی ادویات اور کھادوں کی دستیابی یقینی بنانے کیلئے مانیٹرنگ کے عمل کو مزید سخت کیا جائے۔ملاوٹ شدہ اور غیر معیاری زرعی ادویات وکھادوں کے مکرو ہ دھندے میں ملوث عناصر کیخلاف گھیرا مزید تنگ کیا جائے اور بلا امتیاز سخت قانونی کارروائی عمل میں لاکر انہیں کیفرکردار تک پہنچایا جائے تاکہ آئندہ کیلئے معاشرے کے ان ناسوروں کے ہاتھوں معصوم کاشتکاروں کا معاشی قتل مکمل بند کیا جا سکے۔

نہوں نے کہا کہ امسال حکومت پنجاب کاشتکاروں کو گندم کی طرح کپاس کی بہتر قیمت دلوانے کیلئے پُر عزم ہے لہٰذا کاشتکاروں کو زیادہ سے زیادہ رقبہ پر کپا س کی کاشت کیلئے آمادہ کیا جائے تاکہ کاشتکار فی ایکڑزیادہ پیداوار اور منافع حاصل کرنے سمیت ملکی معیشت کی مضبوطی میں عملی کرداراداکرسکیں۔انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کی وبائی صورت حال کے پیش نظر زرعی معیشت کی ترقی کا پہیہ انشااللہ چلتا رہے گا۔

مزید :

کامرس -