وہ وقت جب شہبازشریف کو صدر مملکت نے وزیراعظم بننے کی پیشکش کی لیکن اس پر انہوں نے کیا جواب دیا ؟ نیا دعویٰ

وہ وقت جب شہبازشریف کو صدر مملکت نے وزیراعظم بننے کی پیشکش کی لیکن اس پر ...
وہ وقت جب شہبازشریف کو صدر مملکت نے وزیراعظم بننے کی پیشکش کی لیکن اس پر انہوں نے کیا جواب دیا ؟ نیا دعویٰ

  

لاہور (ویب ڈیسک) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی صدر میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ نہ میں ڈیل کے تحت گیا تھا اورنہ ہی ڈیل کےتحت واپس آیا ہوں،سابق وزیراعلیٰ پنجاب نے دعویٰ کیا کہ 1993 میں غلام اسحاق نے مجھے بلایا اورکہا کہ تم وزیراعظم بن جاوَ،میں نے صاف جواب دیا کہ یہ ممکن نہیں ہے اور کی جانے والی پیشکش رد کردی۔

 ہم نیوز کے مطابق انہوں نے کہا کہ میں بھائی کو نہیں بلکہ بھائی کے علاج کو چھوڑ کر واپس آیا ہوں،شہباز شریف نے واضح طور پر کہا کہ ہمیں 18 ویں ترمیم میں حمایت پر نیب مقدمات ختم کرنے کی پیشکش نہیں ہوئی ہے۔ن لیگ کے مرکزی صدر میاں شہباز شریف نے کہا کہ 2017 میں نوازشریف کو پانامہ کے بجائے اقامہ پر نااہل کیا۔

میاں شہبازشریف نے کہا کہ چوردروازے سے اقتدار میں آناچاہتا تو میرے پاس بہت سارےمواقع تھے، سبسڈی صرف عثمان بزدار نے دی لیکن حکومت سندھ نے نہیں دی،  اگر18 ویں ترمیم میں کہیں ابہام ہے توتمام پارٹیوں کومل کردیکھنا ہوگا۔

مزید :

قومی -سیاست -