کلبھوشن کی رہائی کیلئے پاکستان سے بیک چینل رابطہ کیا اور۔۔۔ بھارتی جاسوس کے وکیل نے بڑا دعویٰ کردیا

کلبھوشن کی رہائی کیلئے پاکستان سے بیک چینل رابطہ کیا اور۔۔۔ بھارتی جاسوس کے ...
کلبھوشن کی رہائی کیلئے پاکستان سے بیک چینل رابطہ کیا اور۔۔۔ بھارتی جاسوس کے وکیل نے بڑا دعویٰ کردیا

  

لندن  (ویب ڈیسک) بھارتی جاسوس کلبھوشن جادھو کی رہائی کیلئے بھارت کی طرف سے پاکستان سے متعددبار بیک ڈور چینل رابطے ہوئے اور انسانی بنیادوں پر رہا کرنے کی درخواست کی گئی لیکن پاکستان کی طرف سے مطالبہ مسترد کردیا گیا۔

روزنامہ جنگ کے مطابق  یہ دعویٰ عالمی عدالت انصاف میں بھارت کی طرف سے اس کیس کی پیروی کرنے والے وکیل ہریش سالوے نے کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں پاکستان سے سات سے آٹھ بار رابطے ہوئے۔ پاکستان کو متعدد خط لکھے گئے۔ لیکن ان کی طرف سے انکار ہی رہا۔ایک سوال کے جواب میں ہریش سالوے نے لندن سے کہا کہ ہمیں امید تھی کہ پاکستان سے بیک ڈور چینل سے بات چیت کرکے ہم ا نہیں منا لیں گے۔ ہم انہیں انسانی بنیاد پر چھوڑنے کی بات کررہے تھے لیکن ایسا ہوا نہیں۔

دراصل کلبھوشن جادھو کا معاملہ پاکستان کیلئے انا کا مسئلہ بن گیا تھا۔ہم امید کررہے تھے کہ وہ اسے رہا کردیں گے لیکن پاکستان نے رہا نہیں کیا۔ بھارتی قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈول نے اس وقت کے پاکستانی قومی سلامتی کے مشیر ناصر خان جنجوعہ سے رابطہ کیا کہ پاکستان نرمی اور شفقت کا مظاہرہ کرتے ہوئے کلبھوشن کو رہا کردے۔

مزید :

برطانیہ -