قرضوں کے منجمد ہونے سے ترقی پذیر ملکوں کو کیا فائدہ ہوگا؟ سب سے پہلے آواز اٹھانے والے عمران خان نے زبردست بات کہہ دی

قرضوں کے منجمد ہونے سے ترقی پذیر ملکوں کو کیا فائدہ ہوگا؟ سب سے پہلے آواز ...
قرضوں کے منجمد ہونے سے ترقی پذیر ملکوں کو کیا فائدہ ہوگا؟ سب سے پہلے آواز اٹھانے والے عمران خان نے زبردست بات کہہ دی

  

 اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ قرضوں کا منجمد ہونا ترقی پذیر ممالک کومعاونت فراہم کرےگا، ترقی پذیرممالک کومل کراقدامات اٹھاناہوں گے۔

وزیر اعظم عمران خان کا ایتھوپین ہم منصب ابی احمد سے ٹیلی فونک رابطہ ہوا جس کے دوران دونوں رہنماؤں نے قرضوں سےریلیف پلان پرمل کر کام کرنے پراتفاق کیا اور کہا کہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل اوردیگر سٹیک ہولڈرزسےمل کر کام کریں گے۔ ٹیلی فونک گفتگو میں وزیر اعظم عمران خان نے ایتھوپین ہم منصب کودورہ پاکستان کی دعوت بھی  دی ، وزیراعظم نے دو طرفہ تعلقات اورباہمی تجارت بڑھانےپر بھی اتفاق کیا۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ قرضوں کامنجمدہوناترقی پذیرممالک کومعاونت فراہم کرےگا، ترقی پذیرممالک کومل کراقدامات اٹھاناہوں گے، ہم نےلوگوں کی زندگیاں بچانی ہیں، غربت سےنیچےزندگی گزارنےوالوں کی مددکرنی ہے۔

مزید :

قومی -