"ڈاکٹر اسرار نے 20 سال پہلے جو کہا وہ سچ ثابت ہورہا ہے" چیف جسٹس کے اہم ترین ریمارکس

"ڈاکٹر اسرار نے 20 سال پہلے جو کہا وہ سچ ثابت ہورہا ہے" چیف جسٹس کے اہم ترین ...

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس گلزار حمد کا کہنا ہے کہ معروف اسلامی سکالر ڈاکٹر اسرار احمد نے پاکستان کے بارے میں 20 سال پہلے جو پیشگوئیاں کی تھیں وہ آج سچ ثابت ہورہی ہیں۔

چیف جسٹس گلزار احمد نے کورونا وائرس کے پھیلنے پر ازخود نوٹس کیس کی سماعت کے دوران اہم ریمارکس دیے۔ انہوں نے کہا کہ ‏ڈاکٹر اسرار احمد کی باتیں آج سچ ثابت ہو رہے ہیں، ڈاکٹر اسرار صاحب کی تقریریں سن لیں وہ بار بار یہی کہتے رہے، 20 سال پہلے جو باتیں کہیں وہ آج سچ ثابت ہو رہی ہیں، ہمارے ملک کا ایک حصہ ہم سے چلا گیا کچھ حصوں میں آگ لگی ہے پھر بھی ہمیں سمجھ نہیں آتی۔

چیف جسٹس نے اپنے ریمارکس میں مزید کہا کہ  اگر ہم زکوٰۃ، صدقات اور فطرانہ کھا جائیں گے تو پھر کیا ہو گا، جو آدمی خیرات اور زکوة کے پیسے بھی نہ چھوڑے اس سے کیا توقع کی جاسکتی ہے، بیت المال کی رپورٹس میں بھی کرپشن کی نشاندہی ہے،  ہم کس طرف جا رہے ہیں، چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل نے ہمیں خود رائے دینے کی تکلیف نہیں کی، ہم بھی اتنے ٹچی نہیں ہیں۔ صوبوں کوچاہیے کہ زکوٰة کی تقسیم میں شفافیت کیلئے نظام بنائیں، زکوة،صدقہ صاف وشفاف اندازمیں نہ ملے تو کیا ہوگا، زکوة کا پیسہ کھا جائیں گے تو پیچھے کیا رہ جائے گا۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس پاکستان جسٹس گلزار نے وفاق،صوبائی حکومتوں کی رپورٹس پرعدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کام کرنا ہے تونیک نیتی اور شفافیت سے کریں، ملک میں حالات ابتر ہوتے جا رہے ہیں، عملی طور پر کام نہیں ہورہا،صرف پیپر ورک بنایاجارہا ہے۔

مزید :

قومی -