آمدن سے زائد اثاثہ جات، احتساب عدالت کا چودھری برادران کیخلاف انکوائری بند کرنے کا حکم 

آمدن سے زائد اثاثہ جات، احتساب عدالت کا چودھری برادران کیخلاف انکوائری بند ...

  

 لاہور (نامہ نگار) احتساب عدالت نے چودھری برادران کیخلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس کی انکوائری کو بند کرنے کا حکم دے دیا ہے۔احتساب عدالت کے ایڈمن جج شیخ سجاد احمد نے نیب کی انکوائری بند کرنے کی درخواست پر سماعت کی۔ نیب نے چودھری پرویز الہیٰ، چودھری شجاعت حسین اور مونس الہیٰ سمیت دیگر فیملی ممبران کے خلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات انکوائری بند کرنے کے لیے عدالت سے رجوع کیا تھا۔درخواست میں نیب لاہور نے موقف اختیار کیا کہ انکوئری میں چودھری برادران کے خلاف ٹھوس شواہد اور ثبوت نہیں ملے۔ چودھری برادران کی فیملی کے اثاثے قانون کے مطابق ہیں اور ان میں کوئی غیر قانونی اقدام نہیں پایا گیا۔نیب نے کہا کہ تمام اثاثہ جات قومی اداروں میں چودھری برادران نے باقاعدہ شو کروائے اور ان کا باقاعدگی سے ٹیکس بھی ادا کر رہے ہیں۔ نیب لاہور کو تحقیقات میں تمام چیزیں قانون کے مطابق ملی ہیں۔ عدالت چودھری برادران کے خلاف نیب لاہور میں جاری انکوائری کو بند کرنے کا حکم دے۔عدالت میں نیب لاہور کی جانب سے پراسکیوٹر اسد اللہ نے دلائل دیے اور انکوائری کو فوری بند کرنے کی منظوری مانگی جس پر عدالت نے کاروائی کرتے ہوئے نیب لاہور کی استدعا منظور کرلی۔عدالت نے پراسکیوٹر کو 6 مئی کو دلائل کے لیے طلب کر لیا ہے۔ زیر التوا درخواست میں چودھری پرویز الٰہی سمیت دیگر پر غیر قانونی بھرتیوں کا الزام تھا جو ثابت نہیں ہو سکا۔

چوہدری برادران کیس

مزید :

صفحہ اول -