حج کا حتمی فیصلہ 15شوال تک متوقع، خادم حرمین شریفین اعلان کریں گے 

حج کا حتمی فیصلہ 15شوال تک متوقع، خادم حرمین شریفین اعلان کریں گے 

  

  

لاہور(میاں اشفاق انجم سے) حج 2021ء کا حتمی فیصلہ 15شوال تک متوقع،خادم حرمین شریفین اعلان کریں گے۔ سعودی حکومت دنیا بھر سے عازمین حج کوبلانے کی خواہش مند، کرونا کی تیسری لہر کے اثرات کا جائزہ اورویکسین لگانے کا عمل تیزی سے جاری ہے، عید کے بعد 15شوال کو حج 2021ء کا حتمی اعلان، ڈبلیوایچ او کی رپورٹ کی روشنی میں حج محدود یا لا محدود ہونے کا فیصلہ ہو گا سعودی ذرائع کا کہنا ہے سعودی ادارے اپنے طور پر تیاری مکمل کیے ہوئے ہیں،شاہی فرمان کے منتظر ہیں۔ حج گزشتہ سال کی طرح  مقامی سعودی افراد تک محدود رکھنا پڑتا ہے یا دنیا بھر سے محدود تعداد آنے کی اجازت دی جاتی ہے کہا گیا ہے پہلے مرحلے میں 17مئی سے فضائی اور بحری رابطے بحال کرنے کا فیصلہ ہوا ہے کرونا ویکسین لگانے والے سعودی شہریوں کو سفر کی اجازت ہو گی17مئی سے سعودی ائیر لائنز کا اپریشن بھی شروع کیے جانے کی تصدیق ہوئی ہے حج 2021ء کے حوالے سے معلوم ہوا ہے سعودی وزارت الحج نے دنیا بھر کے اسلامی ممالک کے لیے کوٹہ طے کر کے منظوری کے لیے تجویز دے رکھی ہیں موسسہ جات کو شرکہ میں تبدیل کرنے کا عمل بھی انہی تیاریوں کا حصہ ہے بتایا گیا ہے عید تک سعودی شہریوں کی بڑی تعداد ویکسین مکمل کروا لے گی یہ بھی معلوم ہوا ہے سعودی وزارت الحج، وزارت داخلہ، سعودی وزارت الصحت سے مل کر حج 2021ء کو محفوظ بنانے کے لیے میکنزم بنانے میں مصروف ہیں ویکسین مکمل کر کے سرٹیفیکٹ حاصل کرنے والوں کو حج2021ء کے سفر کی اجازت ہو گی دنیا بھر کی طرح سعودی وزارت الحج کی نظریں بھی 15شوال کو خادم حرمین شریفین کے فرمان کی منتظر ہیں۔ سعودی ذرائع نے پاکستان سمیت دیگر ممالک کو حج کوٹہ ملنے کی خبروں کی سختی سے تردید کی ہے اور کہا ہے اب تک کسی ملک کے ساتھ حج کوٹہ کا ایم او یو سائن نہیں ہوا ہے رمضان عمرہ بھی سعودی شہریوں اور اقامہ ہولڈر تک محدود ہے جو ایپ کے ذریعے منظوری سے مشروط ہے کہا گیا ہے رمضان کے آخری عشرے میں ایس او پیز مزید سخت کر دئیے گئے ہیں حرمین شریفین میں 10تراویح پڑھی جارہی ہیں جبکہ مکہ مکرمہ کی دیگر چھوٹی مساجد میں 6تراویح پڑھی جا رہی ہیں ماسک کے بغیر کسی جگہ کسی کو آنے جانے کی اجازت نہیں ہے۔ 

حج کا اعلان

مزید :

صفحہ آخر -