ناموس رسالتؐ ہمارے ایمان کا مسئلہ کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا: علماء کا ردعمل 

ناموس رسالتؐ ہمارے ایمان کا مسئلہ کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا: علماء کا ردعمل 

  

 ملتان (سٹی رپورٹر)یورپی یونین کی جانب سے ناموس رسولت کے قانون کے خاتمہ کا مطالبہ بے بنیاد ہے، عالم اسلام یورپی یونین کے اس مطالبے کو مسترد کرتی ہے  ناموس رسالت کا مسئلہ ہمارے دین و ایمان کامسئلہ ہے جس کبھی بھی کسی بھی قسم کا سمجھوتہ نہیں کیا(بقیہ نمبر43صفحہ6پر)

جا سکتا ہمارے حکمرانوں کو چاہیے کہ وہ اس معاملے کو سنجیدہ لیتے ہوئے یورپی یونین کو باور کرائیں کہ وہ ناموس رسالت کے معاملات میں مداخلت کرنے سے باز رہے ان خیالات کا اظہار مختلف مذہبی تنظیموں سے تعلق رکھنے والے رہنماؤں نے پاکستان فورم میں اظہار خیال کرتے ہوئے کیا اس موقع پر جماعت اہلسنت پنجاب کے ناظم اعلی علامہ حافظ فاروق خان سعیدی نے کہاہے کہ یو رپی یونین کی قرارداد بین الاقوامی چارٹر کے خلاف ہے  امت مسلمہ کا اتحاد وقت کی ضرورت ہے ہماری عزت ہمارا وقار قرآن و سنت سے جڑنے میں ہے۔انہوں نے کہاہے کہ ناموس رسالت کا مسئلہ ہمارے دین و ایمان کامسئلہ ہے جس کبھی بھی کسی بھی قسم کا سمجھوتہ نہیں کیا جائے گاممبر مرکزی رویت ہلال کمیٹی پاکستان علامہ سید خالد محمد ندیم نے کہاہے کہ یورپین یونین کی جانب سے ہمارے دینی معاملات میں مداخلت بالکل غلط ہے انہیں کوئی حق نہیں ہے کہ وہ ناموس رسالے کے معاملات میں مداخلت کرے جس کی شدید مذمت کرتے ہیں ناموس رسالت ہمارے ایمان کا حصہ ہے جس کے لئے کسی بھی قسم کی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے مرکزی جمعیت اہلحدیث ملتان کے ناظم اعلی علامہ عنایت اللہ رحمانی نے کہاہے کہ یورپی پارلیمنٹ کی طرف سے ناموس رسولت کے قانون کے خاتمہ کا مطالبہ بے بنیاد ہے ہم ناموس رسالت کے سپاہی ہیں ناموس رسالت کے تحفظ کے لئے  اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے ہمارے حکمرانوں کو چاہیے کہ وہ اس معاملے کو سنجیدہ لیتے ہوئے یورپی یونین کو باور کرائیں کہ وہ ناموس رسالت کے معاملات میں مداخلت کرنے سے باز رہیں جمعیت علما اسلام ضلع ملتان کے نائب امیر علامہ ابوبکر عثمان الازہری نے کہاہے کہ ناموس رسالت کے قانون کے حوالے سے یورپی یونین کی قرار دار اور ا س معاملے میں پاکستان پر دباؤ بڑھانے کی کوشش سراسر بدیانتی ہے پاکستان سمیت دنیا بھر کا مسلمان اپنے حضور نبی کریم کی ناموس کی خاطر کٹ، مٹ سکتا ہے لیکن کبھی بھی سمجھوتہ نہی کر سکتا انہوں نے حکمرانوں نے مطالبہ کیا ہے کہ دنیاوی حکومتی عارضی اور آنے جانے والی ہیں اصل حکومت میرے رب کی ہے جو کبھی بھی ختم ہونے والی نہیں خدارا ہوش کے ناخن لو، ناموس رسالت کے معاملے میں کسی م مصلحت کا شکار ہوئے بغیر یورپی یونین کو دوٹوک جواب دوکہ ہم اپنے مذہبی معاملات میں آپ کے مطالبات ماننے کے پابند نہیں ہیں ہم وہ کام کریں گے جو جس کی اجازت شریعت دے گی۔

فورم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -