معیشت میں بہتری لانے کا دعویٰ فلاپ حکومت نت نئے تجربے کررہی ہے: لیاقت بلوچ 

معیشت میں بہتری لانے کا دعویٰ فلاپ حکومت نت نئے تجربے کررہی ہے: لیاقت بلوچ 

  

ملتان (انٹر ویو رانا عرفان الاسلام، عکاسی شہزاد انور امروہی) جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی نائب امیر لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ کرپشن، بد عنوانی، قومی وسائل کی غیر منصفانہ تقسیم کی وجہ سے پاکستان کے مسائل میں اضافہ ہو رہاہے  اقتدار بڑی بڑی جماعتوں کی کمزوری ہے جس کے لئے امریکہ، اور اسٹیبلشمنٹ سے اتحاد کر لیتے ہیں جس نے حکومت کرنی ہوتی ہے وہ اسٹیبلشمنٹ سے معاملات طے کرکے آتے ہیں انتخابی اصلاحات کسی ایک پارٹی یا جماعت کا مسئلہ نہیں ہے تمام بڑی چھوٹی سیاسی پارٹیوں کو انتخابی اصلاحات کے لئے ماحول بنانا ہوگا پارٹیوں کے قائدین ایک دوسرے کے ساتھ مل بیٹھ کے بات کرنے کو تیار ہوجائیں تو بات آگے بڑھ سکتی ہے اتحادی سیاست ناکام ہو چکی ہے جماعت اسلامی نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ آئندہ انتخابات میں اپنے پر چم تلے اور ترازوں کے نشان میں قومی و صوبائی اسمبلیوں کی نشستوں سے انتخابات میں حصہ لے گی جماعت اسلامی کا ٹارگٹ 50لاکھ ووٹر ز ہیں جس کے لئے ملک میں کمپین کا آغا زکیا جا رہاہے یہ لمبا اور مشکل سفر ہے لیکن جماعت اسلامی اس کے لئے جدوجہد جاری رکھے گی ان خیالات کا اظہار انہوں نے روزنامہ پاکستان کو انٹرویو دیتے ہوئے کیا اس موقع پر انہوں نے مزید کہاہے کہ پاکستان تحریک انصاف نے اقتدار میں آنے سے قبل بڑے بڑے دعوے اور وعدے کئے لیکن اہل لیڈر شپ اور ٹیم نہ ہونے کی وجہ سے مار کھا گئے ہیں عمران خان سے توقع تھی کہ وہ  اقتدار میں آنے کے بعدپاکستان کی معیشت میں بہتری لائے گا اور ایسے فیصلے کرے گا جس سے صنعتکاروں،سرمایہ کاروں کو تحفظ، زراعت میں بہتری اور اوورسیز پاکستانیوں کا اعتماد حاصل ہو سکے گا لیکن تین سالوں میں ایسا کچھ بھی نہیں ہو سکا ہے انہوں نے کہاہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی،پاکستان مسلم لیگ سمیت دیگر سیاسی جماعتوں میں جمہوریت نہیں ہے پی ٹی آئی نے گراس روٹ لیول پر انتخابات کرانے کی کوشش کی لیکن کامیاب نہ ہو سکے انہوں نے کہاہے کہ پاکستان کو چلانے کے لئے  اکابرین نے طریقہ کار طے کر دیا تھا اس طریقے پر عمل کرنے کی کسی نے بھی کوشش نہ کی ہے لیکن یہاں پاکستان کو بنانے والے اکابرین کے احکامات کو نظر انداز کرکے اپنے اپنے تجربے کئے جا رہے ہیں انہوں نے کہاہے کہ سیاست دانوں پر بیورو کریسی ہیوی ہیں پارلیمنٹ کو عوام سے دور کر دیا گیاہے اس فورم پر عوام کے مفادات کے لئے کوئی اقدامات نہیں کئے جا رہے پاکستان کے آئین میں واضع سماجی، معاشی اور آئینی انصاف اور ہر قسم کا قانون موجو دہے لیکن ان قوانین پر عمل در آمد نہ ہونے کی وجہ سے مسائل پیدا ہو رہے ہیں  انہوں نے کہاہے کہ ن لیگ کا ووٹ کو عزت دو کا نعرہ اچھا تھا لیکن پارٹی میں جان نہیں تھی، پانی سر سے اوپر جا رہاہے شفاف انتخابات کسی نے ہمیں جھولی میں ڈال کر نہیں دینے ملک میں انتخابی اصلاحات کے لئے تما م سیاسی پارٹیوں کو مفادات سے بالاتر ہو کر ایک پلیٹ پر متحد ہونے کی ضرورت ہے تمام سیاسی جماعتیں خود کو ٹھیک کرکے نیشنل ایجنڈے پر متفق ہو کر فیصلہ کرلیں کہ اقتدارکے لئے اسٹیبلشمنٹ کا آلہ کار نہیں بنیں گے اور نہ ہی اقتدار کے لئے چور راستے کا انتخاب کریں گے تو سارے معاملات ٹھیک ہو جائیں گے  انہوں نے کہاہے کہ پی ٹی آئی کے اقتدار میں آنے کے بعد ملک میں ہونے والے ضمنی انتخابات میں ہونے والی شکست کی وجہ سے بے توقیری ہو رہی ہے جس کے ذمہ دار خود عمران خان ہے انہوں نے کہاہے کہ جماعت کے کارکنان،جماعت اسلامی کی پالیسیوں سے مطمئن ہیں اورمیدان میں نکل پڑے ہیں لوگوں کو قائل کریں گے کہ 74سالوں سے آپ نے سب کو آزمالیا ہے اب ایک با رجما عت اسلامی کو آزما کر دیکھیں کیونکہ جماعت اسلامی کے پاس اہل،محب وطن،قابل، مخلص دیانت دار لوگوں کی بڑی ٹیم موجود ہے جوکہ ملک کو بحرانوں، مسائل سے نکالنے کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کر سکتی ہے۔

لیاقت بلوچ

مزید :

صفحہ اول -