شہرت ملنے پر برا کہنے والے تعریفیں کرنے پر مجبور ہوگئے ہیں ، اداکارہ وینا ملک

شہرت ملنے پر برا کہنے والے تعریفیں کرنے پر مجبور ہوگئے ہیں ، اداکارہ وینا ملک

لاہور (شوبز ڈیسک ) خود کو ”سیکس سمبل“ کہلوانا پسند کرنے والے متنازعہ اداکارہ وینا ملک نے کہا ہے کہ شہرت ملنے کے بعد میری برائیاں کرنے والے اب تعریفیں کرنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔ وینا ملک نے ابھی تک جن بالی ووڈ فلموں میں اداکاری کے ”جوہر“ دکھائے ہیں ان تمام کی تمام فلموں کا شمار ”سی کلاس“ میں ہوتا ہے، ایسی فلمیں بجٹ اور کاسٹ کے اعتبار سے تو ہلکی ہوتی ہی ہیں لیکن اس کے ساتھ ان کی پروموشن بھی بڑی فلموںکی طرح نہیں کی جاتی۔ انہوں نے کہا کہ خوب سے خوب ترکی تلاش میںہر کوئی رہتا ہے، میں ایک پروفیشنل اداکارہ ہوں اور اکثر میری ملاقاتیں پراجیکٹس کو سائن کرنے یا کسی نئے پراجیکٹ کے حوالے سے فلمسازوں، ہدایتکاروں اور دیگرسے ہوتی رہتی ہیں، جہاں تک بات بالی ووڈ کے معروف ہیروز کی ہے تو ان کے ساتھ ہر کوئی کام کرنا چاہتا ہے، اگر میں نے کسی جگہ ایسا کچھ کہہ دیا ہے تو اس میں برا ماننے والی کون سی بات ہے۔

، کچھ لوگ بلاوجہ میرے منہ سے نکلی ہر بات کو ایشو بنا دیتے ہیں، کچھ لوگ تو اس طرح سے مجھے موضوع بحث بنالیتے ہیں جب کہ کچھ لوگ بلاواسطہ میرا نام استعمال کرکے خبروں کی زینت بن جاتے ہیں لیکن مجھے اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔میں نے اپنی محنت، لگن سے پاکستان میں ایک منفرد پہچان بنائی اور پھر بالی ووڈ جیسی پروفیشنل فلم انڈسٹری میںکام کیا۔ اس دوران میری زندگی کے ساتھ کچھ ایسے واقعات جڑے جن کی وجہ سے میرے مخالف ٹولے کو بہت کچھ کہنے کا موقع ملا تھا لیکن وہ لوگ یہ بھول چکے تھے کہ یہ میری ذاتی زندگی تھی جب کہ عملی زندگی میں، میں ان سے بہت ا?گے نکل چکی ہوں۔ مجھ پر اللہ تعالیٰ کی خاص کرم نوازی ہے کہ میں نے پہلے پاکستان میں جو کام کیا اس کو لوگوں نے بہت سراہا اور اب جو کام بالی ووڈ میں کر رہی ہوں اس کو بھی بہت پذیرائی مل رہی ہے۔ میں یہ بات بخوبی جانتی ہوں کہ بالی وڈ میں بننے والی فلموں میںبولڈ مناظر ہوتے ہیں مگراب لوگ بھی اس بات کو سمجھنے لگے ہیں کہ ایک فنکاراپنی مرضی سے کچھ نہیںکرتا۔ وہ ایک کردار کو سکرین پر دکھا رہا ہوتا ہے اور یہ کردار ہمارے معاشرے کا حصہ ہی ہوتے ہیں۔

مزید : کلچر