حکومت کی غفلت اور کوتاہی کے باعث ڈرون حملے نہیں رک سکے، منظور وٹو

حکومت کی غفلت اور کوتاہی کے باعث ڈرون حملے نہیں رک سکے، منظور وٹو

لاہور(اے این این) پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان کی غفلت اور کوتاہی کی وجہ سے پاکستان کی حاکمیت کے منافی ہونے والے ڈرﺅن حملے تاحال نہیں رک پائے ہیں، ڈرﺅن حملوں کا کیس پاکستان نے بہت کمزور انداز میں لڑا ہے ڈرﺅن حملوں کا معاملہ وزیر خارجہ کے بغیر عالمی سطح پر اٹھانا ممکن نہیں حکومت میں سرکاری طور پر کوئی وزیر خارجہ نہیں لیکن ہر وزیراپنے بیانات سے وزیر خارجہ بننے کی کوشش کر رہا ہے موجودہ حکومت کے پاس قیادت کا فقدان ہے ۔اپنے ایک بیان میں میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ وزیر داخلہ کے خارجہ امور پر بیانات لمحہ فکریہ ہےں حکومت خارجہ امور سمیت ہر محاز پر ناکام نظر آ رہی ہے پیپلز پارٹی نے ہمیشہ ڈرﺅن حملوں کی مخالفت کی ہے انہوں نے ڈرون حملوں کی شدید مذمت کی اور اسے پاکستان کے اندرونی معاملات میں کھلم کھلا مداخلت قرار دیا ہے ، کچھ قوتیں سوچے سمجھے منصوبے کے تحت پاکستان کو غیر مستحکم کرنا چاہتی ہیں حالیہ ڈرﺅن حملے مفاہمت کے عمل کو روکنے کی سازش ہیں مزید برآں انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کی چار ماہ کی کارکردگی نے ہی ثابت کر دیا ہے کہ پیپلز پارٹی غریب عوام اور مسلم لیگ اشرافیہ کی جماعت ہے، دہشت گردی کو روکنے کیلئے موجودہ حکومت کو اقدامات کرنے ہوں گے ورنہ صورتحال مزید خراب ہو سکتی ہے۔ ملک میں دہشت گردی پر کنٹرول نہیں کیا جا سکا۔ موجودہ حکومت دہشت گردی کو روکنے میں ناکام نظر آتی ہے۔

منظور وٹو

مزید : صفحہ آخر